fbpx

ہم مدارس کے خیرخواہ ہیں تحریر: حفیظ الرحمن قلندرانی

السلام علیکم
آج قائد جمعیت کی ایک پرانی تقریر حکمرانوں کی منافقت کے بارے میں سنی تو سوچا اس موضوع پر کچھ لکھ لوں
امید ہے آپ دوستوں کو یہ پوسٹ اچھا لگے گا

دوستوں آپ کو معلوم ہوگا کہ کچھ عرصہ پہلے وزیر اعظم عمران خان صاحب نے افسوس کا اظھار کیا تھا
اور فرمایا تھا میں چاہتا ہوں کہ مدارس سے بھی ڈاکٹر اور انجنیئر نکلیں
انھوں نے مزید کہا تھا کہ مجھے بھت دکھ ہوتا ہے کہ مدارس کے طلباء ڈاکٹر اور انجنیئر کیوں نہیں بنتے؟؟؟
تو میں کہنا چاہتا ہوں خان صاحب مدارس کو چھوڑو اور جو ادارے آپ کے ماتحت ہیں ان سے ڈاکٹر اور انجنیئر پیدا کرو
خان صاحب آپ کے ماتحت چلنے والے اسکول کالجز اور یونیورسٹیز میں کونسے ڈاکٹر اور انجنیئر پیدا ہوئے ہیں کبھی ان کو بھی بیان کیا کریں
ان بیچاروں کے لئے بھی دکھ کا اظھار کریں جو ڈاکٹر اور انجنیئر بننے کے لئے اپنے لاکھوں روپے خرچ کرتے ہیں لیکن ڈاکٹر اور انجنیئر نہیں بنتے
اور جو بات ہے مدارس کے طلباء کی وہ الحمد للہ عالم اور حافظ بننے کے ارادے سے آتے ہیں عالم اور حافظ ہی بنتے ہیں
ان کا خاص جو کام ہے بقول آپ لوگوں کے مردے نہلانا الحمد للہ انھوں نے اس میں بھی اتنی مہارت حاصل کی ہوتی ہے کہ مدرسے کا ناکارہ ترین طالبعلم بھی مردے کو نہلا لیتا ہے
اور عوام کو کوئی بھی مسئلا درپیش ہو وہ ان کے اس مسئلے کو شرعی طریقے سے بھترین طریقے سے بیان کرتے ہیں
اور جب حافظ قرآن کی ضرورت ہو رمضان میں ہر مسجد میں قرآن سنانے والے مدارس کے ہی حفاظ ہوتے ہیں
ہر مسجد کا امام و خطیب مدرسے کا فارغ ہوتا ہے اور الحمد للہ یہ نا ممکن بات ہے کہ ان میں سے کسی کے پاس مدرسے یا وفاق المدارس کا جعلی سند ہو
اور جو اسکول کالج یونیورسٹیز کی بات ہے جو ہمیشہ حکمرانوں کے ماتحت رہے ہیں
ان میں آپ نے آج تک کیا کیا ہے ذرا میں اس کی وضاحت کردوں
ہمارے ملک میں جب کوئی منصوبہ بنانا ہو مثلا روڈ بن رہے ہیں تو ہم دیکھتے ہیں وہاں کام کرنے والا اور اس کام کا ٹھیکہ لینے والے چین کے انجنیئرز ہیں اب یہاں پوچھنے کی بات یہ ہیکہ ہمارے انجنیئرز کہاں ہیں
جو ہمیں چین کے انجنیئرز کی ضرورت پڑی
اور جب خدانخواستہ کوئی حادثہ ہوتا ہے ہم اس کی تحقیقات کے لئے فرانس سے تحقیقاتی ٹیم بلاتے ہیں ہمارے کالجز اور یونیورسٹیز کے پڑہے لکھے کہاں گئے
اور تو اور کچھ دن پہلے ایک خبر چلی یورپ نے پاکستانی جہازوں کی پرواز پر پابندی لگائی اس وجہ سے کہ ہمارے پائلیٹز کی ڈگریاں جعلی تھیں آپ کے سیاستدانوں کی ڈگریاں بھی جعلی ہیں آپ کے اسکولوں میں پڑہانے والے ماسٹرز کو پڑہنا نہیں آتا میں آپ کو آپ کے اپنے ہی اداروں کی کتنی خامیاں بیان کروں جناب
بس ہم آپ کو اتنا کہنا چاہتے ہیں آپ ایسی باتیں کر کے مدارس کے طلباء اور عام عوام کے ذھن میں مدارس کے بارے میں تشویش میں ڈالنے کی کوشش نہ کریں ہر کوئی جانتا ہے کہ آپ اس ملک میں کس مقصد سے آئے ہیں اور کیا چاہتے ہیں
الحمد للہ ہمارے اکابرین نے آپ جیسوں کی چالوں سے بچنے کے لئے ہماری خوب اصلاح کی ہے
اور آپ وہی کام کریں جو آپ کے ماتحت ہیں آپ ہماری فکر نہ کریں کہ ہم کیوں ڈاکٹر اور انجنیئر کیوں نہیں بنتے اور خدا کے واسطے ہماری اصلاح کرنے کی بھی کوشش نہ کریں
انشاءاللہ جب میں عالم بن گیا میں خود آپ کی اصلاح کرنے کی کوشش کروں گا
اور جیسا کہ قائد جمعیت نے فرمایا تھا مدارس بنتے ہی آپ جیسوں کی اصلاح کرنے کے لئے ہیں
تو انشاءاللہ ہمارے مدارس آپ کو یہ ثابت بھی کر کے دکھائیں گے
اور الحمد للہ ہمیشہ ثابت بھی کیا ہے
#دینی_مدارس_زندہ_باد
#پاکستان_پائندہ_باد
آپ کی دعائوں کا طلبگار