fbpx

شیخ رشیدکی وگ اتار کر لانیوالےکو 50 ہزار روپے انعام دوں گا:حنیف عباسی

راولپنڈی :شیخ رشیدکی وگ اتار کر لانیوالےکو 50 ہزار روپے انعام دوں گا:اطلاعات کے مطابق وزیراعظم شہباز شریف کے معاون خصوصی حنیف عباسی نے شیخ رشید سے متعلق عجیب و غریب اعلان کیا ہے۔

راولپنڈی میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے حنیف عباسی کا کہنا تھا کہ عمران خان کے ایما پرمسجد نبوی ﷺ کےافسوس ناک واقعےکی منصوبہ بندی کی گئی، بدترین دشمن کے سامنے بھی مسجد میں کوئی بات نہیں کرتا، مسجد نبوی کے واقعہ کی پلاننگ عمران خان اور شیخ رشید نےکی، شیخ رشید کا بھتیجا بھی پلاننگ شامل رہا۔

حنیف عباسی کا کہنا تھا کہ شیخ رشید سیاسی مقابلہ کریں، جس حلقے سے شیخ رشید الیکشن لڑیں گے وہاں سے میں بھی لڑوں گا اور مقابلہ کروں گا، یہ جہاں جائیں گے انہیں انڈے اور ٹماٹر پڑیں گے، شیخ رشید کی وگ اتار کر لانے والےکو 50 ہزار روپے انعام دوں گا۔

وزیراعظم کے معاون خصوصی کا کہنا تھا کہ مسجد نبوی میں مریم اورنگزیب، شازین بگٹی کو گالیاں دی گئیں، ان سب لوگوں کیخلاف مقدمہ درج کرکےگرفتار کرنا چاہیے، یہ نواز شریف یا شہباز شریف کی نہیں، مدینہ کے تقدس کی بات ہے، اس فعل میں شامل افراد کے خلاف سخت کارروائی ہونی چاہیے۔

ادھر عوامی مسلم لیگ کے سربراہ اور سابق وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید نے اسلام آباد کے تھانہ کوہسار میں درخواست جمع کراتے ہوئے نواز شریف، شہباز شریف، حمزہ شہباز، رانا ثنا اللہ سمیت 7 افراد پر قتل کی پلاننگ کا الزام عائد کر دیا ہے۔

سابق وفاقی وزیر داخلہ نے اپنے قتل کی منصوبہ بندی کے خلاف تھانہ کوہسار میں درخواست جمع کرتے ہوئے موقف اپنایا کہ میرے میڈیا سینٹر کے باہر گزشتہ رات سے مشکوک افراد دیکھے جا رہے ہیں، وزیرِداخلہ رانا ثناءاللہ کی جانب سے مجھے دھمکیاں بھی مل رہی ہیں، حکومت مخالف ایک اہم رکن ہوں میری جان کو خطرہ ہے۔

شیخ رشید کی درخواست کے متن کے مطابق اگر میں باہر یا جیل میں قتل ہوگیا تو نواز شریف، شہباز شریف اور حمزہ شہباز، رانا ثناء اللہ، حسین نواز، معین نواز، سلمان شہباز کو شامل تفتیش کیا جائے۔

انہوں نے اپنی درخواست میں موقف اپنایا کہ رانا ثناء اللہ بدنام زمانہ قاتل، منشیات کیس اور ماڈل ٹاؤن کیس کا مرتکب ہوا ہے۔