fbpx

عمران خان صاحب کیا آپکو معلوم ہے کہ آپ خود ہی مسئلے کی وجہ ہیں؟

عمران خان صاحب کیا آپکو معلوم ہے کہ آپ خود ہی مسئلے کی وجہ ہیں؟

آج کل تقریبا ہر تقریر میں عمران خان کا یہ کہنا ہے کی کہ ملک کا معاشی استحکام تبھی ممکن ہے جب ملک میں سیاسی استحکام ہو گا۔ اور اس کے لیئے وہ فوری انتخابات کا حل تجویز کرتے ہیں۔ مگر پھر اگلی سانس میں وہ یہ بھی کہتے ہیں کہ وہ کسی بھی چور ڈاکو کی حکومت ماننے سے بہتر مرنا پسند کریں گے۔ اور یہ بات تو سب اچھی طرح جانتے ہیں کہ عمران خان اور انکی پارٹی کے علاوہ سب چور اور ڈاکو ہیں ۔ اس کا یہ مطلب بھی ہے کہ عمران خان صاحب کو صرف وہی جمہوریت اور الیکشن پسند ہیں جس میں وہ جیتیں اور حکومت بھی کرتے رہیں اگلے کئی سالوں تک۔ اب میں عمران صاحب کی پہلی بات کی طرف آتا ہوں کہ ملک کے معاشی استحکام کے لئے ضروری ہے کہ سیاسی استحکام بھی ہو۔

تو میرا سوال یہ ہے کہ عمران خان صاحب کبھی آپ نے سوچا کہ اس کا ایک سادہ حل بھی ہے اور وہ یہ آپ پارلیمنٹ میں واپس جائیں اور ایک ذمہ دار اپوزیشن کا رول ادا کریں اگلے الیکشن تک۔ اس عمل سے یقینی طور پر ملک میں سیاسی استحکام آئے گا اور معیشت بھی بہتر ہو گی بقول آپکے ۔ تو کیا آپ اپنے ملک کے لیے یہ بھی نہیں کر سکتے؟آج قوم آپ سے یہ سوال کرتی ہے کہ کیا آپکی اتنی سی قربانی اس ملک کے لیے نہیں دے سکتی جس سے آپ اتنے عشق کا اظہار کرتے ہیں ۔ مسئلے کا حل آپکے پاس ہے آئین اور قانون کی روشنی اور جمہوری روایات کے مطابق، اگر آپ کسی کو مانتے ہیں۔

قوم آپکے جواب کی منتظر رہے گی