عمران خان سے ملاقات کرنے والے رہنما نے منحرف ن لیگی اراکین کی اصل تعداد بتا دی

پاکستان مسلم لیگ ن کے سابق رہنما یونس انصاری نے اعتراف کیا ہے کہ انہوں نے پندرہ صوبائی اسمبلی اور پانچ قومی اسمبلی اراکین کے ساتھ وزیر اعظم عمران خان سے ملاقا ت کی ہے.

باغی ٹی وی کی رپورٹ‌ کے مطابق یونس انصاری نے اہم انکشافات کرتے ہوئے کہا ہے کہ میں نے انتخابات سے پہلے ہی ن لیگ کو چھوڑ دیا تھا. میں‌ نے جب وزیر اعظم عمران خان سے ملاقا ت کی تو میرے ساتھ پندرہ صوبائی اور پانچ قومی اسمبلی کے ممبران تھے. میں‌ اس سلسلہ میں پچھلے کئی برسوں‌ سے کام کر رہا تھا.

میڈیا رپورٹس کے مطابق یونس انصاری نے الزام لگایا کہ ن لیگ کے عہدیدار لوگوں‌ کی تذلیل کرتے ہیں، جو لوگ میرے ساتھ گئے تھے وہ ہمارا اثاثہ ہیں میں ابھی ان کا نام نہیں‌ بتا سکتا. میں‌ ان کی عزت کا محافظ ہوں. انہوں نے کہاکہ اگر ہمیں تحریک انصاف میں شامل ہونے کیلئے استعفی بھی دینا پڑا تو ہم اس کیلئے بھی تیار ہیں‌اور دوبارہ منتخب ہو جائیں‌ گے.

یونس انصاری نے اپوزیشن لیڈر شہباز شریف پر بھی سخت تنقید کی اور کہا کہ یہ افسوس کی بات ہے کہ وہ اپوزیشن لیڈر ہیں. واضح رہے کہ ن لیگ اس وقت ٹوٹ پھوٹ کا شکار ہو رہی ہے اور لیگی اراکین اسمبلی وزیر اعظم عمران خان اور وزیر اعلیٰ پنجاب سےملاقاتیں کر کے تحریک انصاف میں شامل ہونے کی کوشش کر رہے ہیں.

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.