fbpx

بھارت:کسانوں کے حقوق کیلئے احتجاج کرنیوالےمعروف اداکارحادثے میں جانبحق:معاملات پھربگڑگئے

نئی دہلی :بھارت:کسانوں کے حقوق کیلئے احتجاج کرنیوالےمعروف اداکارحادثے میں ہلاک ،اطلاعات کے مطابق بھارت میں کسانوں کے حقوق کے لیے احتجاج کرنے والے انسانی حقوق کے کارکن اور بھارتی اداکار ایک کار حادثے میں ہلاک ہوگئے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق پنجابی فلموں کے37 سالہ معروف اداکار دیپ سدھو بدھ کے روز بھارتی ریاست پنجاب سے نئی دہلی جاتے ہوئے ایک کار حادثے میں چل بسے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق ہائی وے پر ہونے والے حادثے میں دیپ سدھو کی کار ایک ٹرک سے ٹکراگئی تھی جس میں وہ شدید زخمی ہوئے، انہیں اسپتال منتقل کیا گیا تھا تاہم وہ زخموں کی تاب نہ لا کر انتقال کرگئے۔ان کے انتقال کی خبرجنگل میں آگ کی طرح پھیلی اور اس وقت سوشل میڈیا پرایک ہنگامہ برپا ہے

یہ بھی بتایا جارہا ہے کہ دیپ سدھو مودی سرکار کی جانب سے کی گئی متنازع زرعی اصلاحات کے خلاف کسانوں کی تحریک میں پیش پیش تھے اور ان پر الزام تھا کہ وہ گذشتہ سال26 جنوری کو بھارتی یوم جمہوریہ کے موقع پر ہونے والےکسانوں کے پرتشدد احتجاج کی قیادت کرنے والوں میں سے ایک تھے۔

خیال رہےکہ گذشتہ سال 26 جنوری کے روز کسانوں اور پولیس کے درمیان شدید تصادم بھی ہوا تھا جس میں پولیس نے کسانوں پر لاٹھی چارج کیا تھا، احتجاج کے بعد کسانوں کو اکسانے کے الزام میں دیپ سدھو کو گرفتار کرلیا گیا تھا اور انہیں 2 ماہ بعد ضمانت پر رہائی ملی تھی۔

دیپ سدھو کے انتقال پر بھارتی اداکاراؤں اور سیاستدانوں کی جانب سے افسوس کا اظہار کیا جارہا ہے۔بھارتی میڈیا کے مطابق دیپ سدھو نے متعدد پنجابی فلموں میں کام کیا تھا اور انہیں پنجابی فلم فیئر سمیت مختلف ایوارڈ بھی ملے تھے۔

دوسری طرف کسانوں نے مرنے والے اداکار کی جدوجہد کو جاری رکھنے کا عہد کیا ہے اور کہا ہے کہ وہ اپنے مطالبات سے ایک انچ بھی پیچھے نہیں ہٹیں گے