fbpx

بھارت نے غیر قانونی طور پر مقبوضہ جموں و کشمیر کو قتل گاہ میں تبدیل کر دیا:مشال ملک

اسلام آباد: بھارت نے غیر قانونی طور پر مقبوضہ جموں و کشمیر (IIOJK) کو قتل گاہ میں تبدیل کر دیا:مشال ملک ،اطلاعات کے مابق پیس اینڈ کلچر آرگنائزیشن کے چیئرپرسن مشال حسین ملک نے کہا کہ دہشت گرد بھارتی فورسز نے بھارتی غیر قانونی طور پر مقبوضہ جموں و کشمیر (IIOJK) کو قتل گاہ میں تبدیل کر دیا، جہاں وادی میں نوجوان کشمیریوں اور حریت رہنماؤں کو بے رحمی سے قتل اور تشدد کا نشانہ بنایا جا رہا ہے۔

مشال ملک نے بھارتی جارحیت کی مذمت کرتےہوئے کہا کہ وادی میں دنیا کی بدترین ریاستی دہشت گردی پر بین الاقوامی برادری اور انسانی حقوق کی نام نہاد تنظیموں کی مجرمانہ خاموشی پر دکھ ہوتا ہے

اسیر کشمیرچیئرمین یاسین ملک کی اہلیہ مشال نے بدھ کے روز لائن آف کنٹرول کے دونوں جانب اور دنیا بھر میں منائے جانے والے کشمیر کے یوم سیاہ کے حوالے سے جاری ایک ویڈیو بیان میں کہا کہ یہ وہ بدقسمت دن تھا جب بھارتی سفاک قوتوں نے تقریباً 74 سال قبل وادی پر حملہ کرکے کشمیریوں کو اپنے منصفانہ اور بین الاقوامی سطح پر تسلیم شدہ حق خودارادیت کا مطالبہ کرنے پر ان کا خون بہانا شروع کیا۔

27 اکتوبر 1947 کو بھارتی فوجیوں نے برصغیر کی تقسیم کے منصوبے کی کھلی خلاف ورزی کی اور کشمیریوں کی امنگوں کے خلاف جموں و کشمیر پر حملہ کر کے اس پر قبضہ کر لیا۔

انہوں نے کہا کہ کشمیر، پاکستان اور دنیا کے دیگر حصوں میں ہونے والی احتجاجی ریلیوں میں بڑی تعداد میں عوام کی شرکت بھارتی غلامی کے طوق کو توڑنے کے ان کے منصفانہ مقصد کے ساتھ کشمیر کے عزم اور عزم کا اظہار کرتی ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ کشمیریوں نے دنیا کو یہ مضبوط پیغام بھی دیا ہے کہ کشمیریوں کے تئیں بے حسی کے باوجود وہ اپنے وطن پر بھارت کے ناجائز قبضے کو مسترد کرتے ہیں اور اپنے خون کے آخری قطرے تک اپنے ناقابل تنسیخ حق خودارادیت کے حصول کے لیے اپنی جدوجہد جاری رکھیں گے۔

چیئرپرسن نے مزید کہا کہ قابض افواج نے مقبوضہ وادی میں بربریت اور دہشت گردی کی تمام حدیں عبور کرتے ہوئے جنت جیسی وادی کو جہنم بنا دیا ہے۔

مشال ملک نے عالمی برادری کے دہرے معیار پرتنقید کرتے ہوئے کہاکہ عالمی برادری دوغلے پن کو ترک کرے اور دیرینہ تنازعہ کشمیر کے حل کے لیے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قراردادوں پر عمل درآمد کرے تاکہ کشمیری عوام دنیا کے دیگر حصوں کی طرح آزادانہ زندگی گزار سکیں۔

Facebook Notice for EU! You need to login to view and post FB Comments!