نشہ:شراب:جنسی ہراسگی:انڈین جرنیلوں کےایک دوسرے پر الزامات :دوجرنلزکےدرمیان شدید لڑائی:استعفے شروع

نئی دہلی :نشہ،شراب جنسی ہراسگی:بھارتی جرنیلوں کےایک دوسرے پرشدیدالزامات:دوجرنلزکےدرمیان شدید لڑائی:گتھم گتھا،بھارتی میڈیا نے بھارتی جرنیلوں کے درمیان شدید لڑائی کی تصدیق کردی ،یہ لڑائی نشہ ،شراب ، جنسی ہراسگی کے ایک دوسرے سے الزامات پرشروع ہوکرکرپشن اورملک دشمنی کے ثبوتوں تک پہنچ گئی

معتبر ذرائع کے مطاق بھارتی فوج تاریخ کے مشکل ترین دور سے گزررہی ہے اوراب توصورت حال اس قدرخراب ہوچکی ہے کہ بھاری جرنیل آپس میں گتھم گتھا ہونا شروع ہوگئے ہیں

بھارتی فوج کے آپسی اختلافات کی خبریں پاکستانی میڈیا بھارت دشمنی میں نہیں بلکہ بھارتی میڈیا کی طرف سے اس لڑائی پرآہ وبکا کے بعد پیش کررہا ہے ۔ بھارتی میڈیا کی رپورٹ میں بتایا گیا کہ بھارتی فوج کے افسران کے آپسی اختلافات شدت اختیار کر گئے ہیں۔

بھارتی میڈیا کے مطابق بھارتی جنرلز آپس میں ہی لڑ پڑے ۔ کمانڈر لیفٹننٹ جنرل اور لیفٹننٹ جنرل نے ایک دوسرے پر سنگین الزامات عائد کیے۔

لیفٹننٹ جنرل کلیر آرمرڈ کور آفیسر جبکہ لیفٹننٹ جنرل ریپسوال انجینئیر ہے۔ دونوں جنرلز کا تعلق مشہور فوجی خاندانوں سے ہے۔ آرمی ذرائع کے مطابق انکوائری عدالت جنوب مغربی کمانڈ کے کام اور ان دونوں سینئیر افسران کے مابین پائے جانے والے اختلافات کا اس کمانڈ پر پڑنے والے اثر کا جائزہ لے گی۔

اختلافات شدت اختیار کرنے اور لڑائی بڑھنے پر انڈین سینٹرل آرمی کمانڈ نے معاملے کی اعلیٰ سطحی تحقیقات کروانے کا حکم دے دیا ہے۔

تحقیقات سینٹرل آرمی کمانڈر لیفٹننٹ جنرل آئی ایس چمن کریں گے۔ دونوں جنرلز نے اختلافات میں شدت آنے پر شکایات سے بھرپور خطوط بھارتی آرمی چیف کو لکھے تھے۔ دونوں جنرلز میں راجھستان اور پنجاب کی سرحدی سکیورٹی پر اختلاف پایا جاتا تھا۔

صرف یہ ہی نہیں بلکہ ایسی اطلاعات بھی ہیں کہ بھارتی فوج کے جرنیلوں کے ایک دوسرے کے اہلخانہ سے جنسی ہراسگی کے الزامات سے شروع ہونی والی یہ لڑائی اربوں ڈالرزکرپشن کے ثبوتوں‌تک پہنچ گئی ہے

یہ بھی بتایا جارہا ہے کہ بھارتی فوج کے اندر اس قدرشدید اختلافات اورلڑائی کی وجہ سے واشنگٹن اورتل ابیب بھی بہت زیادہ پریشان ہیں اورمودی کوہنگامی پیغامات کے ذریعے اس لڑائی کو دبانے اورخبریں منظرعام پرآنے سے روکنے کی استدعا کی گئی ہے

دوسری طرف یہ بھی اطلاعات ہیں کہ بھارتی آرمی چیف کی طرف سے ان شدید اختلافات کی وجہ سے استعفی دینے کی بات بھی ہوگئی ہے جسے بھارتی دفاعی حکام چھپا رہے ہیں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.