"باغی ٹی وی”کے ٹویٹراکاونٹ کوبلاک کرنےکےلیےبھارتی حکومت کی ٹویٹرکودرخواست:وجہ بھی سامنے آگئی

لاہور:کشمریوں؛بھارتی مسلمانوں کی آواز”باغی ٹی وی”کے ٹویٹراکاونٹ کوبلاک کرنے کے لیے بھارتی حکومت کی ٹویٹرکودرخواست، اطلاعات کے مطابق بھارتی حکومت کی طرف سے ٹویٹرکویہ درخواست دی گئی ہے کہ پاکستان کے معروف صحافی مبشرلقمان کی سرپرستی میں چلنے والے "باغی ٹی وی” کا ٹویٹراکاونٹ بلاک کردیاجائے

ٹویٹرکے نام بھارتی حکومت نے باقاعدہ یہ درخواست دیتے ہوئے کہا ہے کہ "باغی ٹی وی”بھارت کی انفارمیشن ٹیکنالوجی پالیسی کے خلاف کام کررہا ہے لٰہذا اس ٹی وی کے ٹویٹراکاونٹ کو بلاک کردیا جائے

 

 

دوسری طرف اس حوالے سے معروف صحافی مبشرلقمان نے اپنے پیغام میں کہا ہے کہ اس درخواست سے یہ ثابت ہوگیا ہے کہ بھارتی حکومت اپنے روایتی ہتھکنڈوں پرآگئی ہے اوراپنی ظالبانہ روش کو نہیں چھوڑنا چاہتی

ان کا کہنا تھا کہ وہ تو کشمیری مسلمانوں کے دل کی آوازہیں وہ بھارت میں آباد کروڑوں مسلمانوں کوتکلیف میں نہیں دیکھ سکتے اوراگربھارت یہ سمجھتا ہے کہ وہ کشمیری مسلمانوں اوربھارتی مسلمانوں‌پرہونے والی مظآلم پراٹھنے والی آوازکودبا دے گا تواس کی خام خیالی ہے

 

ان کا یہ بھی کہنا ہے کہ انہوں نے صرف باغی ٹی وی ہی نہیں بلکہ دنیا کے ہرپلیٹ فارم پربھارتی اورکشمیری مسلمانوں کے لیے آوازاٹھائی اوراٹھاتے رہیں گے

اس کے لیے پہلے بھی بہت قربانی دی اوراب بھی قربانی دینےکے لیے تیارہوں لیکن ان مظلوم مسلمانوں پرہونے والے مظالم پرچپ نہیں رہ سکتا

ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ وہ توبھارت میں طاقتورہندووں کے ہاتھوں دلتوں اوردیگرکمزوراوربے بس ہندووں کے حق میں آوازاٹھاتے ہٰیں اوراسے ایک اخلاقی ذمہ داری سمجھتے ہیں

مبشرلقمان کہتے ہیں کہ نے بھارت میں سکھوں پرہونے والے مظالم کی آوازبھی بلند کی ، کسان ہوں یا عام انسان مبشرلقمان ان کوتکلیف میں نہیں دیکھ سکتا
انہوں نے کہا کہ دنیا کواب معلوم ہوجانا چاہیے کہ بھارت سوشل میڈیا پرکس قدرحاوی ہے اورکس طرح سوشل میڈیا کے ذریعے حق اورمظلوم کی آواز دبانے میں گھنونے کھیل کھیلتا ہے

یاد رہے کہ بھارتی انفارمیشن ٹیکنالوجی پاللیسی کے تحت کوئی بھی سوشل میڈیا چینل، یا دیگرمیڈیا ذرائع بھارت میں ہونے والے واقعات پر اگررپورٹنگ کریں گے اوربھارتی حکومت کی دل آزاری کا سبب بنیں گی تو وہ بھارت کے معاملات میں مداخلت تصورکی جائیں گی

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.