بھارتی سرکاری ایئر لائن نے متعدد پائلٹ سمیت 200 ملازمین کو کیا فارغ

0
42

بھارتی سرکاری ایئر لائن نے متعدد پائلٹ سمیت 200 ملازمین کو کیا فارغ

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق کرونا وائرس کی وبا نے انڈیا کی فضائی کمپنیوں کو دیوالیہ کردیا، کرونا وائرس کی وجہ سے بھارت میں 21 روزہ لاک ڈاؤن ہے، پبلک ٹرانسپورٹ بند ہے، فضائی سروس بھی معطل ہے

فضائی سروس بند ہونے کی وجہ سے بھارت کی فضائی کمپنیاں ایک ایک کر کے ملازمین کو نوکریوں سے نکال رہی ہیں تو کچھ کمپنیز ملازمین کی تنخواہوں میں کٹوتی کا اعلان کر رہی ہیں،

بھارت کی سرکاری ایئر لائنس کمپنی ایئر انڈیا نے تقریبا 200 ملازمین کو نوکریوں سے فارغ کر دیا ہے اور انہیں کہا گیا ہے کہ جب تک کرونا سے پیدا شدہ صورتحال واضح نہیں‌ہوتی تب تک آپ کو نوکریوں سے نکالا جاتا ہے، نکالے جانے والے افراد میں ایئر انڈیا کے پائلٹ بھی شامل ہیں

انڈیا میں‌14 اپریل تک تمام فلائٹس بند ہیں، ملکی اور غیر ملکی فضائی آپریشن معطل کیا گیا ہے، انڈین ایئر لائن کے تمام طیارے گراؤنڈ کر دیئے گئے ہیں جس کی وجہ سے ایئر انڈیا کو بھاری خسارے کا سامنا ہے، اسی وجہ سے ملازمین کو نکالا گیا ہے.

بھارت کی دو بڑی ایئر لائنز کمپنیوں نے ملازمین کی تنخواہوں میں کٹوتی کا اعلان کر دیا ہے

بھارت کی دو بڑی ایئر لائنز انڈیگو اور وستارا کے مالی حالات اتنے خراب ہو گئے ہیں کہ دونوں کمپنیاں اپنی پروازیں بند کرنے کا سوچ رہی ہیں، انڈیگو کے سی ای او رونجوئے دت نے ملازمین کی تنخواہوں میں کمی کا اعلان کر دیا ہے،

انڈیگو کے چیف ایگزیکٹو آفیسر کا کہنا ہے کہ کورونا وائرس کی وجہ سے آمدنی میں خاطر خواہ کمی واقع ہوئی ہے، جس کی وجہ سے ایئر لائن انڈسٹری کا وجود خطرے میں پڑ گیا ہے۔ انڈڈیگو کے فلائٹ آپریشن کے سربراہ اسیم میترا نے پائلٹوں کو جمعرات کی صبح بھیجے گئے ایک ای میل میں کہا ہے کہ ہوا بازی شعبے کی معاشی حالت نمایاں طور پر خراب ہو چکی ہے، لہذا آئندہ چند روز میں سخت اقدامات اٹھانے ضروری ہو گئے ہیں۔

واضح رہے کہ کورونا وائرس کی وجہ سے دنیا کے ممالک نے فضائی آپریشن معطل کر دیئے ہیں جس کی وجہ سے ہوا بازی کے شعبے کو شدید دھچکا لگا ہے،انڈیگو کے سی ای او نے بھی ایک ای میل میں کہا کہ ایئر لائن کی معاشی حالت خراب ہونے کی وجہ سے اب کوئی بھی ایئرلائن مستحکم نہیں بلکہ سب خسارے میں ہیں،

بھارت کی انتہائی اہم ترین شخصیت کرونا سے خوفزدہ، کروائے گی ٹیسٹ

کرونا وائرس،بھارت میں اتنے مریض ہو جائیں گے کہ لاشیں بلڈوزر سے گڑھے میں ڈالنا پڑیں گی

چین میں‌ کرونا وائرس کا پہلا مریض اب کس حال میں ہے ؟

کرونا کے وار جاری، 288 پولیس اہلکاروں میں ہوئی کرونا کی تشخیص

سعودی عرب میں کرونا کے مریضوں میں مسلسل اضافہ، شاہ سلمان نے دیا عالمی ادارہ صحت کو فنڈ

بھارت میں کرونا وائرس کی تباہی جاری ہے، بھارت میں کرونا وائرس سے ہلاکتوں کی تعداد 53 ہو گئی ہے

بھارت میں کرونا کے مریضوں کی تعداد 2 ہزار سے زیادہ ہو گئی ہے، دہلی کے نظام الدین تبلیغی مرکز میں 219 افراد میں کرونا وائرس کی تشخیص ہو چکی ہے، بھارت میں کرونا وائرس سے 156 افراد صحتیاب ہو چکے ہیں

بھارتی ریاست تلنگانہ میں کرونا وائرس کے ایک دن میں 30 مریض سامنے آئے ہیں جبکہ ایک روز میں 3 ہلاکتیں ہونے کے بعد تلنگانہ میں مجموعی ہلاکتیں 9 ہو گئی ہیں،تلنگانہ میں کرونا کے 154 مریض ہیں جن کا علاج جاری ہے،تلنگانہ کے تبلیغی جماعت سے تعلق رکھنے والے افراد کی تلاش جاری ہے جن کو قرنطینہ کیا جائے گا کیونکہ ان میں سے اکثر دہلی تبلیغی مرکز گئے تھے.تبلیغی مرکز سے واپس لوٹنے والے 5 افراد میں کرونا کی تشخیص ہوئی جس پر انہیں آئسولیٹ کر دیا گیا

Leave a reply