fbpx

انتشار کے خواہاں ناکام ہو چکے ہیں،مولانا فضل الرحمان

جے یو آئی کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے کہا ہے کہ ڈیرہ اسماعیل خان جغرافیائی لحاظ سے خاص اہمیت رکھتا ہے۔

ڈیرہ اسماعیل خان میں تقریب سے خطاب کرتے ہوئے مولانا فضل الرحمان کا کہنا تھا کہ ڈی آئی خان چین سے گوادر تک کی شاہراہ کی گزرگاہ ہے،نوازشریف نے یہاں کئی منصوبے شروع کیے،پی ٹی آئی حکومت آنے کے بعد جاری منصوبوں کو بند کردیا گیا،ایک بیانیہ دیاگیا کہ پاکستان میگا پروجیکٹ کا متحمل نہیں ہوسکتا،چین نے پاکستان پر اعتماد کرکے اربوں ڈالر کی سرمایہ کاری کی،پی ٹی آئی نے جاری سی پیک کو بندکردیا،ملکی ترقی روکنے کے باوجود دعویٰ کیا جارہا کہ ہم سے بہتر کوئی نہیں،فاٹا کے انضمام کے بعد ان سے کیے گئے وعدے پورے نہیں کیے گئے،فاٹا کے حالات ماضی کے مقابلے میں زیادہ گھمبیر ہوگئے ہیں،

چائے کی آفر مولانا کو ابھی، ہمیں کس چیز کی آفر ہوئی تھی؟ کیپٹن ر صفدر کا انکشاف

پی ڈی ایم کو لاہورجلسہ الٹا پڑ گیا،مولانا ،بلاول اور نواز شریف کے واضح اشارے، اہم انکشافات مبشر لقمان کی زبانی

نوازشریف کے این آر او کے لیے فضل الرحمان نے کارکنوں اور علما کو خوار کیا،حافظ حسین احمد

محمود خان اچکزئی پر تمام دیگر صوبوں میں مکمل پابندی لگادی جائے،جمعیت علماء اسلام کے مرکزی رہنما کا مطالبہ

وزیراعظم کو نا اہل قرار دینے سے متعلق پٹیشن دائر کرنے کا مشورہ پی ڈی ایم کو کس نے دے دیا؟

مولانا فضل الرحمان کا مزید کہنا تھا کہ سابق دور حکومت میں معیشت تباہی کی طرف چلی گئی، عمران خان کے دور میں ترقیاتی منصوبے روک دیئے گئے تھے نوازشریف کے دور میں ملک میں اربوں ڈالرزکی سرمایہ کاری ہوئی پاکستان کو اس وقت بیرونی امداد کی ضرورت ہے لیکن ہم نے بین الاقوامی برادری کے اعتماد کو خراب کردیا ہے اور ملک میں سرمایہ کاری نہیں ہورہی ہم نے عالمی برادری کے پاکستان پر اعتماد کو بحال کرنا ہے ملک میں انتشار کے خواہاں ناکام ہو چکے ہیں اسرائیل کبھی بھی پاکستان کا خیرخواہ نہیں ہوسکتا،ہمیں سود کا خاتمہ کرنا ہوگا سود کے خلاف فیصلہ آنے پر نیشنل بینک اور سٹیٹ بینک نےاپنی اپیلیں واپس لیں جو کہ خوش آئند ہیں ہمیں ملک کی ترقی کےلئے خود اعتمادی کے ساتھ پالیسی اپنانا ہوگی پاکستان خطے میں باوقارملک بننے کی صلاحیت رکھتا ہے اس خطے میں زرعی ترقی کے اقدامات بھی ضروری ہیں