اسلام آباد ہائیکورٹ کا مسابقتی کمیشن کے چیئرمین کو عہدے سے ہٹانے کا حکم

اسلام آباد ہائیکورٹ کا مسابقتی کمیشن کے چیئرمین کو عہدے سے ہٹانے کا حکم

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق اسلام آباد ہائی کورٹ کے دو رکنی بنچ نے وفاق کی انٹراکورٹ اپیل پر فیصلہ سناتے ہوئے مسابقتی کمیشن کی چیئرپرسن ودیا خلیل اور دو ارکان ڈاکٹر محمد سلیم اور ڈاکٹر شہزاد انصر کو عہدے سے فوری ہٹانے کا حکم سنادیا۔

عدالت نے چیئرپرسن مسابقتی کمیشن اور دو ممبران کی بحالی کے سنگل بنچ کے فیصلے کو کالعدم قرار دے دیا۔ وفاقی کابینہ نے چار اکتوبر2018 کو مسابقتی کمیشن کی چیئرپرسن ودیا خلیل اور 2 ارکان کا فیصلہ کیا تھا۔

فنانس ڈویژن نے 15 اکتوبر 2018 کو ان کی برطرفی کا نوٹیفکیشن جاری کیا تھا۔ تینوں ارکان نے برطرفی کے خلاف عدالت سے رجوع کیا جس پر اسلام آباد ہائی کورٹ کے سنگل بنچ نے حکومت کا برطرفی کا حکم کالعدم قرار دے کر چیئرپرسن مسابقتی کمیشن اور ممبران کو بحال کردیا تھا۔

وفاق نے عدالت عالیہ کے سنگل بنچ کے فیصلے کے خلاف انٹرا کورٹ اپیل دائر کی تھی۔

اسلام آباد ہائیکورٹ نے اپنے فیصلے میں کہا کہ 30 روز میں چیئرمین مسابقتی کمیشن کی تعیناتی کی جائے اور شفاف انداز میں تعیناتی ہونی چاہئے.چیئرپرسن مسابقتی کمیشن کے اب تک کے فیصلوں کو قانونی تحفظ حاصل ہو گا،

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.