ورلڈ ہیڈر ایڈ

نوکری کا جھانسہ دیکر خواتین کی برہنہ ویڈیوز بنانے والا بابا گرفتار، خود کو بیورو کریٹ ظاہر کرتا تھا

وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں نوکری کا جھانسہ دے کر مجبور خواتین سے زیادتی کرنے اور ان کی برہنہ ویڈیوز بنا کر بلیک میل کرنےو الے گروہ کے مرکزی ملزم کو گرفتار کر لیا گیا ہے.

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق تھانہ کورال پولیس نے جس ملزم کا حراست میں‌ لیا ہے وہ خود کو بیورو کریٹ اور پولیس افسر ظاہر کرتا تھا. محمد شفیع نامی ادھیڑ عمر ملزم خواتین کو نوکری کھا جھانسہ دے کر اپنے دفتر بلاتا اور اس دوران ان کی مجبوریوں سے فائدہ اٹھا کر ان کی عزتوں سے کھلواڑ کیا جاتا. شفیع بابا نے اپنے دفتر میں خفیہ کیمرے لگا رکھے تھے جن سے ویڈیوز بنائی جاتیں‌اور پھر مجبور خواتین کو بلیک میل کر کے ان سے پیسے بٹورے جاتے تھے.

رپورٹ کے مطابق ملزم محمد شفیع کو پولیس نے گرفتار کر کے چودہ روز کیلئے جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھیج دیا ہے. مذکورہ ملزم کو کورال پولیس نے حراست میں‌ لیا ہے. تفتیشی افسر احسان اللہ کا کہنا ہے کہ ملزم کی گرفتاری کے دوران ویگو گاڑی سے پولیس کی ریوالونگ لائٹ برآمد ہوئی ہے جبکہ اسی طرح اس کے موبائل فون سے لڑکیوں‌ کی برہنہ تصاویر اور ویڈیوز بھی ملی ہیں. پولیس افسر کا کہنا تھا کہ ویڈیوز بارے کوئی مدعی سامنے آتا ہے تو قانونی کاروائی کی جائے گی.

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.