fbpx

اسرائیل میں میں کورونا وائرس کی نئی قسم کے دو کیسز رپورٹ

اسرائیل میں میں کورونا وائرس کی نئی قسم کے دو کیسز سامنے آگئے-

باغی ٹی وی : خبر رساں ادرے کے مطابق بیرون ملک سے اسرائیل کے بین گوریون ہوائی اڈے پر آنے والے دو اسرائیلی مسافروں میں ویریئنٹ کووڈ۔19 کی قسم اومیکرون کی دو ذیلی اقسام BA.1 اور BA.2 کی مجموعی قسم پی سی آر ٹیسٹ کے دوران سامنے آئی۔

اسرائیل کے وبائی امراض کے محکمے کے سربراہ سلمان زارکا نے اس ویریئنٹ کو کم خطرے کا حامل قرار دیا-

اسرائیلی اخبار ہاریٹز کے مطابق اسرائیل وزارت صحت کی جانب سے بیان میں کہا گیا کہ یہ قسم ابھی تک پوری دنیا میں نامعلوم ہے تاہم وہ اس حوالے سے زیادہ پریشان نہیں ہیں اس نئی قسم کے دو کیسز میں بخار، سر درد جیسی معمولی علامات سامنے آئی ہیں لہٰذا اس میں کسی خاص طبی علاج کی ضرورت نہیں محسوس ہوتی۔

سلمان زار نے یہ نہیں بتایا کہ مریض کہاں سے سفر کر رہے تھے لیکن انہوں نے کہا کہ ان کی عمریں 30 کی دہائی میں ہیں جو اپنے نوزائیدہ بیٹے سے وائرس کا شکار ہوئے۔

زارکا نے آرمی ریڈیو کو بتایا کہ دو اقسام کے ملنے سے بننے والی قسم کے بارے میں سب اچھے سے واقف ہیں، اس مرحلے پر ہم اس کے بارے میں فکر مند نہیں ہیں اور ہمیں امید ہے یہ زیادہ خطرناک ثابت نہیں ہو گی۔اسرائیل کی 92لاکھ کی آبادی میں سے 40 لاکھ سے زائد افراد کو کورونا وائرس کی ویکسین کے تین ڈوز لگ چکے ہیں۔

کورونا ہلاکتوں میں کمی، تین مریض جاں بحق، 609 افراد وائرس سے متاثر

اسرائیل کی وزارت صحت کے ڈائریکٹر جنرل ناچمن ایش نے بدھ کے روز ایف ایم ریڈیو سے بات کرتے ہوئے کہا کہ یہ قسم اسرائیل میں پھیل سکتی ہے کورونا کی مختلف قسم یہاں ابھر سکتی تھی، ہم ابھی تک نہیں جانتے کہ اس کا کیا مطلب ہے یہ امکان ہے کہ متاثرہ جوڑا اسرائیل کیلئے پرواز میں سوار ہونے سے پہلے متاثر ہواتھا-

یاد رہے کہ اسرائیل کی جانب سے نئے ویریئنٹ کا اعلان ایک ایسے پر کیا گیا ہے جب گزشتہ روز ہی پاکستان نے گزشتہ روز ہی کورونا وائرس کے سبب عائد کی جانے والی پابندیاں ختم کرنے کا اعلان کیا ہے۔

واضح رہے کہ دنیا بھر میں کورونا وائرس کے کیسز میں تیزی سے کمی واقع ہو رہی ہے اور وائرس کی نئی اقسام سامنے آنے کے باوجود یہ ماضی کی اقسام کی نسبت زیادہ مہلک نہیں ہیں۔

کیسز کے ساتھ ساتھ شرح اموات میں نمایاں کمی کے پیش نظر دنیا بھر میں وائرس کی وجہ سے عائد کی گئی پابندیاں ختم کی جا رہی ہیں جس سے معمولات زندگی اور معیشت کی بحالی کا عمل شروع ہو چکا ہے۔

این سی اوسی کا ملک بھرمیں کورونا سے متعلق تمام پابندیاں ختم کرنے کا اعلان

بدھ کو وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹر فیصل سلطان کے ہمراہ نیوز کانفرنس کرتے ہوئے نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن کے سربراہ اسد عمر کا کہنا تھا کہ ہمیں علم نہیں کہ یہ وبا ختم ہوگی یا نہیں لیکن فی الحال ایسا لگتا ہے کہ یہ چلتی رہے گی اور معمول کا حصہ بن جائے گی اس لیے ہم نے آج کورونا وائرس کے سبب لگائی گئی تمام پابندیاں ختم کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔