fbpx

اسرائیلی فورسز کا مسجد اقصٰی میں تشدد کا مسلسل چوتھا روز، یہودیوں کی عبادت کیلئے مسلمانوں کو بے دخل کر دیا

بیت المقدس: اسرائیلی فورسز نے آج مسلسل چوتھے روز مسجد اقصیٰ میں داخل ہو کر نمازیوں کو تشدد کا نشانہ بنایا اور انھیں جبری طور پربے دخل کرکے صحن خالی کروالیا۔

باغی ٹی وی : غیر ملکی میڈیا کے مطابق اسرائیلی پولیس نے مسجد اقصٰی میں یہودیوں کو عبادت کا موقع دینے کے لیے مسلمان نمازیوں کو جبری طور پر باہر نکال دیا اس امتیازی سلوک پر احتجاج کرنے والے نمازیوں کو تشدد کا نشانہ بنایا گیا اور 18 کو حراست میں لے لیا گیا۔

مسجد اقصیٰ میں اسرائیلی فوج کا پھر حملہ،17 نمازی شہید

رپورٹ کے مطابق نماز فجر کے بعد یہودیوں کا ایک گروپ مسجد اقصیٰ میں داخل ہوا اور اس جگہ عبادت کرنی چاہی جو صرف مسلمانوں کے لیے مختص ہے اس پر نمازیوں نے احتجاج کیا تو اسرائیلی پولیس بیچ میں آگئی اور یہودیوں کو عبادت کرنے کی اجازت دے دی اور مسلمانوں کو مسجد اقصیٰ سے جبری طور پر بے دخل کردیا یہ مسلسل چوتھا روز ہے جب اسرائیلی پولیس نے نمازیوں کو بیدخل کرکے یہودیوں کو عبادت کی اجازت دی۔

مقبوضہ بیت المقدس:اسرائیلی پولیس کی مسجد اقصیٰ میں ہوائی فائرنگ اور شیلنگ؛ 152…

مسجد اقصیٰ کے کسٹوڈین اردن اور اسرائیلی حکومت کے درمیان رمضان سے قبل مذاکرات ہوئے تھے اور ماہ مقدس میں مسلمانوں کی بڑی تعداد کی آمد کے امکان پر خصوصی انتظامات اور ضابطہ اخلاق پر اتفاق کیا گیا تھا تاہم اسرائیل کی جانب سے اس ضابطہ اخلاق کی مسلسل خلاف ورزی کی جا رہی ہے۔

کینیڈا :مسجد میں فائرنگ 5 نمازی زخمی