ورلڈ ہیڈر ایڈ

اسرائیلی جیل میں قید بیمار فلسطینی شہید

اسرائیلی جیلوں میں قید کئی بیماریوں میں مبتلا اور قابض فوج کی مجرمانہ غفلت کا شکار فلسطینی بسام السائح طویل بیماری کے بعد دم توڑ گیا۔47 سالہ بسام اسرائیل کے’ھساف ھروفیہ’ اسپتال میں شہید ہوئے۔
اسرائیلی فوج کی فائرنگ، دو فلسطینی نوجوان شہید
مرکز اطلاعات فلسطین کے مطابق بسام پر2015ءمیں ایک یہودی اور اس کی بیوی کو ہلاک کرنے کا الزام تھا ۔ مذکورہ یہودی نے نابلس میں فلسطینی دوابشہ خاندان کو زندہ جلا کرشہید کر دیا تھا جس کے ردعمل میں بسام نے حملہ کیا تھا۔

بیماری کے آخری مختصرعرصے میں بسام کوکئی اسرائیلی اسپتالوں میں منتقل کیا گیا ۔

بسام کی صہیونی جیلوں میں انتہائی تشویشناک حالت تھی۔ اس کا جگر پھول گیا تھا جبکہ دل کے پٹھے کمزور اور ان کے کام کرنے کی صلاحیت ختم ہو چکی تھی اور اس کے پھیپھڑوں میں بھی پانی بھرچکا تھا۔ بسام تقریبا آٹھ سال سے خون اور ہڈیوں کے کینسر کا شکار رہا ۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.