fbpx

جاپان اور کوریا کے درمیان دشمنی میں اضافہ ، حالات کشیدہ ہوگئے

ٹوکیو: جاپان اور کوریا کے درمیان دشمنی انتہا کو پہنچ گئی اور دونوں ممالک ایک دوسرے کو نیچا دکھانے کے لیے پر تولنے لگے. ان کشیدہ تلعقات کا آغاز جاپان اور جنوبی کوریا کی اقتصادی جنگ سے ہوا ہے ، جاپان نے جنوبی کوریا کو قابل بھروسہ اقتصادی شراکت داروں کی ” وائٹ لسٹ ” سے نکالنے کی منظوری دے دی۔

جاپان اور کوریا کے درمیان کشیدہ اختلافات کے بارے میں مغربی میڈیا میں اس وقت بہت سی خبریں گردش کررہی ہیں،ذرائع کےمطابق جنوبی کوریا کو قابل بھروسہ اقتصادی شراکت داروں کی ” وائٹ لسٹ ” سے نکالنے کی منظوری دے دی، جس کے بعد دنوں پڑوسی ملکوں کے تعلقات مزید خراب اور گلوبل سپلائی چین متاثر ہونے کا خدشہ پیدا ہو گیا ہے۔

مغربی ذرائع ابلاغ نے اس حوالے سے یہ رپورٹ کیا ہے کہ جاپان کے نئے اقدام پر عمل رواں ماہ کی 28 تاریخ سے ہوگا، جس کے بعد فوجی مقاصد کے لیے قابل استعمال مواد کی برآمد کی منظوری سخت کر دی جائے گی،جس کے بعد جنوبی کورین برآمد کنندان کو ایکسپورٹ لائسنس رکھنے کے لیے اضافی انتظامی طریقہ کار اختیار کرنا پڑے گا۔