ورلڈ ہیڈر ایڈ

جعلی اکاؤنٹ کیس میں نیب کو ملی بڑی کامیابی، ملزمان پلی بارگین کرنے کو تیار

جعلی اکاؤنٹس کیس میں گرفتار ملزمان نے نیب کو پلی بارگین کے لئے درخواست دے دی

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق جعلی اکاؤنٹس کیس میں گرفتار ملزمان پیسے دینے کے لئے راضی ہو گئے انہوں نے پلی بارگین کے لئے درخواست دے دی، احتساب عدالت نے درخواستوں پر کاروائی کا حکم دے دیا ہے، جعلی اکاؤنٹس کیس میں گرفتار تین ملزمان خورشید انور جمالی ، سید عارف علی اور سید آصف محمود کو نیب نے احتساب عدالت پیش کیا ،ان کا جسمانی ریمانڈ آج ختم ہوا تھا

احتساب عدالت میں دوران سماعت وکیل کا کہنا تھا کہ تینوں ملزمان نیب کو رقم دینے کے لئے تیار ہیں وہ لوٹی ہوئی رقم واپس کرنا چاہتے ہیں ،انہوں نے پلی بارگین کے لئے نیب کو درخواست دے دی ہے. احتساب عدالت کے جج محمد بشیر کے استفسار پر نیب نے بتایا کہ ملزموں کی درخواستوں پرعمل ہو رہا ہے، درخواستیں منظوری کے لئے ہیڈ کوارٹر بھجوائی گئی ہیں.

عدالت نے ملزمان کے ریمانڈ میں 31 جولائی تک توسیع کر دی .

بعد ازاں عدالت نے تینوں ملزمان کے جسمانی ریمانڈ میں 31 جولائی تک توسیع کرتے ہوئے کہا کہ یہ آخری مرتبہ جسمانی ریمانڈ ہے اگلی بار ملزمان کو عدالتی ریمانڈ پر جیل بھیجا جائے گا.

ملزمان پر سندھ نوری آباد پاور کمپنی اور سندھ ٹرانسمشن اینڈ ڈسپیچ کمپنی کے منصوبوں میں میسرز ٹیکنومین کائنیٹک پرائیویٹ لمیٹڈاور دیگر من پسند کمپنیوں کو نوازنے کا الزام ہے۔ چیف ایگزیکٹو آفیسر میسرز ٹیکنومین کائنیٹک پرائیویٹ لمیٹڈ سید آصف محمود نے نوری آباد پاور کمپنی کے ڈائریکٹر اور کنسلٹنٹ خورشید انور جمالی اور نوری آباد پاور کمپنی کے ڈائریکٹرسید عارف علی سے ملی بھگت کر کے خورد برد اور منی لانڈرنگ کی جس سے قومی خزانہ کو 16ملین ڈالر کا نقصان پہنچا

واضح رہے کہ سابق صدر آصف زرداری بھی جعلی اکاؤنٹس کیس میں گرفتار ہیں، عدالت سے ضمانت کی درخواست مسترد ہونے پر انہیں گرفتار کیا گیا تھا، وہ جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالے ہیں، زرداری کی ہمشیرہ فریال تالپور کوبھی نیب نے گرفتار کر رکھا ہے.

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.