جے یو آئی نظریاتی کے امیدوار پر قاتلانہ حملہ

0
120
crime

جمیعت نظریاتی ضلع کوئٹہ کے امیر قاری مہراللہ پر قاتلانہ حملہ ہوا ہے

حملے میں قاری مہراللہ محفوظ رہے, قاری مہر اللہ بلوچستان اسمبلی کے حلقہ پی بی 45 اور حلقہ حلقہ این,اے 264 سے انتخاب لڑ رہے ہیں،قاری مہراللہ کو نماز فجر کے بعد مسجد سے گھر آتے ہوئے نشانہ بنایا گیا،تاہم وہ محفوظ رہے،مولانا قاری مہراللہ کو دو جنوری کو جے یو آئی نظریاتی نے ٹکٹ جاری کیا تھا،

قبل ازیں گزشتہ روز شمالی وزیرستان میں ایک انتخابی امیدوار کی فائرنگ سے موت ہو گئی تھی، بلوچستان کے علاقے تربت میں ن لیگی امیدوار فائرنگ سے زخمی ہو گیا تھا،شمالی وزیرستان کے علاقے میران شاہ میں فائرنگ سے آزاد امیدوار ملک کلیم اللہ سمیت تین افراد کی موت ہوئی ہے، حملہ آور جائے وقوعہ سے فرار ہو گئے،ملک کلیم اللّٰہ صوبائی اسمبلی کے حلقے پی کے 104 سے آزاد امیدوار تھے،چنددن قبل اسی علاقےمیں سابقہ رکن قومی اسمبلی محسن داوڑ پر بھی قاتلانہ حملہ ہوا تھا،

 پشاور ہائیکورٹ نے تاریخی فیصلہ دیا

مجھے بلے کی آفر ہوئی میں نے انکار کر دیا

بلے کے نشان کے بعد پی ٹی آئی کا نام و نشان بھی ختم ہوجائےگا ۔

 پی ٹی آئی کے ساتھ آج جو کچھ ہو رہا ہے وہ اسکا اپنا کیا دھرا ہے ،

عمران خان نے تبدیلی کے نام پر عوام کو دھوکہ دیا

سماعت سے محروم بچوں کے والدین گھبرائیں مت،آپ کا بچہ یقینا سنے گا

Leave a reply