fbpx

اگر کوئی جرم نہیں کیا تو گرفتاری کا ڈر کیوں ہے؟ شیری رحمان کی عمران خان پرتنقید

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق پیپلز پارٹی کی رہنما، وفاقی وزیر شیری رحمان نے کہا ہے کہ عمران خان ہر نئے دن اپنے پرانے بیان سے یوٹرن لیتے ہیں،

وفاقی وزیر برائے ماحولیاتی تبدیلی سینیٹر شیری رحمان کا کہنا تھا کہ یہ واحد شخص ہے جو آئے روز اپنے ہی بیان سے انحراف کرتا ہے، اب پنجاب میں اعتماد کے ووٹ سے توجہ ہٹانے کیلئے انہوں نے الزامات کا نیا سلسلہ شروع کر دیا ہے،ان کو سوالات اداروں یا مخالفین سے نہی اپنے وزیراعلی سے کرنے چاہئیں، نیا بیانیہ بنانے سے حقیقت نہی بدل جائے گیحملے کا الزام اداروں پر لگانے سے ان کو کچھ حاصل نہیں ہوگا، اس سے پنجاب حکومت اور کیسز میں کوئی رعایت نہیں ملے گی،الزام تراشی اور گالم گلوچ کر کے رعایتیں لینے کا دور اب گزر چکا،

شیری رحمان کا مزید کہنا تھا کہ اب ادارے اور عوام ان کی بلیک میلنگ میں نہیں آئے گے، مخالفین کو ہسپتالوں سے اٹھا کر جیل بھیجنے والا خود گرفتاری سے کیوں خوفزدہ ہے؟ اپنی گرفتاری کو روکنے لیئے لوگوں کو سڑکوں پر آنے کو کیوں اکسا رہے ہیں؟دوسروں کو جھوٹے کیسز بنا کر گرفتار کرنے والا شخص اتنا کیوں بوکھلا گیا ہے؟ اگر کوئی جرم نہیں کیا تو گرفتاری کا ڈر کیوں ہے؟

عمران خان کا جھوٹا بیانیہ سب نے دیکھ لیا،آڈیو کے بعد بھی یوٹرن لے سکتے ہیں،عظمیٰ بخاری

ممنوعہ فنڈنگ کیس،الیکشن کمیشن نے فیصلہ سنا دیا،تحریک انصاف "مجرم” قرار’

،عمرا ن خان لوگوں کو چور اور ڈاکو کہہ کے بلاتے تھے، فیصلے نے ثابت کر دیا، عمران خان کے ذاتی مفادات تھے