ایم کیو ایم نے وفاقی کابینہ چھوڑ دی

0
232

ایم کیو ایم نے وفاقی کابینہ چھوڑ دی ہے

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق پیپلزپارٹی کی قیادت نے سی ای سی ارکان سے مشاورت کی ہے پیپلزپارٹی کی قیادت نے ارکان کو معاہدے کے نکات سے آگاہ کیا، پیپلزپارٹی نے سی ای سی کے تمام ارکان کو معاہدے سے متعلق اعتماد میں لے لیا،پیپلزپارٹی کی سی ای سی نے ایم کیو ایم کے ساتھ معاہدے کی منظوری دے دی،

نجی ٹی وی کے مطابق متحدہ اپوزیشن اور ایم کیو ایم کا معاہدہ 27 نکات پر مشتمل ہے جس پر متحدہ اپوزیشن کی تمام قیادت نے دستخط کیے ہیں معاہدے میں پیپلزپارٹی کے سعید غنی اور ایم کیو ایم کے جاوید حنیف نے اہم کردار ادا کیا

خالد مقبول صدیقی کی زیرصدارت ایم کیو رابطہ کمیٹی کا ویڈیو لنک اجلاس ہوا اجلاس میں ایم کیو ایم کی رابطہ کمیٹی کے تمام اراکین شریک تھے اجلاس میں اپوزیشن سے معاہدہ کی منظوری دے دی گئی رابطہ کمیٹی نے متحدہ اپوزیشن سے معاہد ے کی توثیق کردی

رہنما ایم کیوایم نسرین جلیل نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا کہ جنگیں ہوجاتی ہیں پھر بھی لوگ بیٹھ جاتے ہیں لوگ کوشش کرتے ہیں بہتری آئے،ہمیں حوصلہ دیں کراچی میں بہتری آئے ،تھوڑی دیر میں سب پتہ چل جائے گا

رہنما ایم کیو ایم امین الحق کا کہنا تھا کہ میں اپنے عہدے سے استعفیٰ دے دیا ہے میں نے اپنے فرائض ایمانداری سے ادا کیے ہیں ایم کیو ایم رابطہ کمیٹی کی ہدایت پر عمل کیا ہے،

تحریک انصاف کی حکومت کو اب تک کا سب سے بڑا جھٹکا ملنے والا ہے حکومتی اتحادی جماعت وفاقی کابینہ سے مستعفی ہو گئی ہے ایم کیو ایم نے کابینہ چھوڑنے کا فیصلہ کیا تھا اب ایم کیو ایم کے وزرا نے کابینہ سے استعفیٰ دے دیا ہے ایم کیو ایم کے وفاقی وزراء امین الحق اور فروغ نسیم نے اپنےاستعفے وزیر اعظم ہاؤس ارسال کئے ہیں ، امین الحق کی جانب سے تصدیق کر دی گئی کہ ان کے استعفے وزیر اعظم کو ارسال کر دیے گئے ہیں امین الحق نے بیان جاری کیا جس میں کہا گیا کہ متحدہ قومی موومنٹ نے متحدہ اپوزیشن کا ساتھ دینے کا فیصلہ کیا ہے جس کے بعد اب وفاقی وزیر رہنے کاکوئی جواز نہیں رہتا

رات گئے اپوزیشن اتحاد اور ایم کیو ایم میں معاہدہ طے پایا اسکے بعد حکومت کے وفد نے بھی ایم کیو ایم سے ملاقات کی تا ہم کامیابی نہ مل سکی، اب صحافی امیرعباس نے دعویٰ کیا ہے کہ ایم کیو ایم کے وزراء آج کابینہ سے استعفیٰ دے دیں گے، فروغ نسیم، امین الحق استعفیٰ دیں گے،. امیر عباس کا مزید کہنا تھا کہ میں پارلیمنٹ میں ہوں اور ایم کیوایم کی اپوزیشن کیساتھ ڈیل کی تصدیق کرسکتا ہوں کہ یہ زبانی کلامی نہیں ہوئی، ڈیل پر ایم کیوایم کی جانب سے خالد مقبول جبکہ اپوزیشن کی جانب سے آصف زرداری ، شہبازشریف ، بلاول، سردار اختر اور مولانا فضل الرحمان نے دستخط کیے ۔

وفاقی وزیر قانون اور ایم کیوایم کے رہنما فروغ نسیم نے عہدے سے استعفیٰ دینے کا اعلان کیا تھا فروغ نسیم کا کہنا تھا کہ میں اور امین الحق وزارتوں سے استعفیٰ دے رہے ہیں ایم کیوایم اپوزیشن کے پلڑے میں جارہی ہے

چیئرمین پاکستان پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری کا کہنا ہے کہ کہ ایم کیو ایم رابطہ کمیٹی اور پاکستان پیپلزپارٹی کی سی ی سی معاہدے کی توثیق کرے گی ، توثیق کے بعد معاہدے کی تفصیلات میڈیا کو آگاہ کریں گے ، ترجمان ایم کیو ایم کے مطابق آج رابطہ کمیٹی کا اجلاس ایم کیو ایم مرکز بہادر آباد میں ہوگا ، اجلاس میں متحدہ اپوزیشن کے معاہدے کو توثیق کیلئے پیش کیا جائے گا

دوسری جانب حکومت ایک بار پھر ایم کیو ایم کو منانے کی آخری کوشش کر رہی ہے، وزیراعظم عمران خان نے ایم کیو ایم کو منانے کا ٹاسک فیصل واوڈا کو دے دیا فیصل واوڈا کراچی سے اسلام آباد پہنچ چکے ہیں ،نامزد وزیر اعلٰی پنجاب چوہدری پرویز الٰہی نے خالد مقبول صدیقی سمیت ایم کیو ایم کی سینئر لیڈر شپ سے بیک ڈور رابطہ کیا ہے، وزیر اعظم کی ہدایت پر کچھ ہی دیر میں اہم ہنگامی ملاقات شیڈول ہو گئی ہے –

اپوزیشن اور ایم کیو ایم کے درمیان کئی گھنٹے طویل مذاکرات کے بعد معاملات طے پاگئے ہیں جس کی تصدیق بلاول بھٹو زرداری اور فیصل سبزواری نے بھی کی ہے دونوں رہنماؤں نے اپنے ٹویٹس میں کہا ہے کہ معاہدے کی ایم کیو ایم کی رابطہ کمیٹی اور پیپلز پارٹی کی سنٹرل ایگزیکٹو کمیٹی سے منظوری لی جائے گی جس کے بعد میڈیا کو معاملات سے آگاہ کیا جائے گا

ایم کیو ایم کی جانب سے اپوزیشن کی حمایت پر عمران خان نے اکثریت کھو دی ہے، حکومت کے قومی اسمبلی میں نمبر 164 رہ گئے جبکہ متحدہ اپوزیشن کے نمبر 177 تک پہنچ گئے۔منحرف حکومتی ارکان کے بغیر ہی متحدہ اپوزیشن کو قومی اسمبلی میں اکثریت مل گئی ہے

وزیراعظم کے خلاف اسمبلی میں تحریک عدم اعتماد جمع ہو چکی ہے ، قومی اسمبلی میں گنتی کے عمل کے دوران حکومت اور اپوزیشن نے نعرے بازی کی ،منحرف اراکین اجلاس میں نہیں آئے ،سپیکر کی جانب سے گنتی کروائی گئی تحریک عدم اعتماد کے حق میں 161ممبران نے ووٹ دیا۔ اسپیکر کم ازکم 3 اور زیادہ سے زیادہ 7 دن میں ووٹنگ کروانے کے پابند ہیں ،قومی اسمبلی کااجلاس 31مارچ تک اجلاس ملتوی کر دیا گیا تحریک عدم اعتماد پربحث 31مارچ سے شروع ہوگی قومی اسمبلی کا اجلاس 31 مارچ 2022 بروز جمعرات شام 4 بجے تک ملتوی کردیا گیا۔

عمران خان ملک کے تیسرے وزیراعظم ہیں جن کے خلاف عدم اعتماد کی تحریک پیش کی گئی ہے، اس سے قبل سابق وزیراعظم بینظیر بھٹو اور شوکت عزیز کے خلاف عدم اعتماد پیش کی گئی تھیں

مہنگائی مکاؤ مارچ مہنگائی کے کپتان سے نجات کا مارچ ہے،مریم اورنگزیب

اتحادیوں کو منانے کا مشن،حکومت متحرک، اہم ملاقاتیں طے

عمران خان کو کہہ دیا وقت سے پہلے الیکشن کرواؤ،شیخ رشید

10 لاکھ لوگوں کو اسلام آباد لانے کا خرچہ کون اٹھا رہا ہے ؟سینیٹر پلوشہ خان

ہنڈیا آدھی تو تقسیم ہوچکی،ابھی بہت سے ادا کار تبدیل ہونے ہیں،چودھری پرویز الہی

ہم سلیکٹڈ کے سامنے نہیں جھکیں گے ،بلاول

مہنگائی مکاؤ مارچ،مریم نواز نے نکلنے سے پہلے کیا کیا؟ تصاویر سامنے آ گئیں

زرداری بڑی بیماری،چیری بلاسم سے جوتا زیادہ چمکتا ہے، ڈیزل سستا ہوگیا ،وزیراعظم کا جلسے سے خطاب

سرپرائیز آنا شروع، بزدار کیخلاف بھی تحریک عدم اعتماد جمع

عدم اعتماد، وفاق، پنجاب کے بعد اگلی باری خیبر پختونخوا کی

پرویز الہیٰ کو ایک بار پھر وزارت اعلیٰ کی پیشکش ہو گئی

پرویز الہیٰ کے بنی گالہ پہنچتے ہی چودھری شجاعت کا بڑا اعلان

بریکنگ،بزدار فارغ، پرویز الہیٰ وزیراعلیٰ پنجاب، حکومت نے اعلان کر دیا

جب "باپ” ساتھ چھوڑ جائے گا تو پھر بچوں کی کیا جرات کہ وہ ساتھ رہیں

خاندان میں اختلافات، چودھری شجاعت نے بڑا سرپرائز دے دیا

عاصم نذیر بھی ن لیگ میں شامل ہو گئے؟ سرپرائز ہی سرپرائز

حتمی فیصلہ 3 اپریل کو ہوگا،بجٹ کے بعد الیکشن ہونے چاہیں،شیخ رشید

استعفیٰ دینے کے بعد بزدار خاموش نہ رہ سکے،بڑا اعلان کر دیا

پرویز الہی نے خاندانی اقدار اور سیاست دونوں کو داو پر لگا دیا،اہم شخصیت کا دعویٰ

جب حکمرانوں کی نیت صاف ہو….عمران خان نے بڑا دعویٰ کر دیا

تمہارے ہاتھ میں اقتداربندرکے ہاتھ میں استرا،سبز ہلالی پرچم پر 35 ٹانکے مت لگاو ،مریم

Leave a reply