fbpx

کراچی میں ڈبل شاھ کا ٹولہ نئے ناموں سے متحرک۔۔۔۔۔۔عوام ہو جائیں ہوشیار

کراچی: کراچی میں ڈبل شاھ کا ٹولہ نئے ناموں سے متحرک۔۔۔۔۔۔۔عوام ہوجائے ہوشیار

تفصیلات کے مطابق باغی چینل کے پروگرام ڈیوٹی کے ہوسٹ اسد احمد خان نے کراچی میں ڈبل شاھ کے ٹولے کو بے نقاب کیا ۔ جس میں انہوں نے بیان کیا کہ کراچی پاکستان کا ایک ایسا شہر ہے جو اربوں نہیں کھربوں کا کاروبار کرتا ہے اور ملک کو اربوں کی کمائی اسی شہر سے ہوتی ہے۔ مزید بتایا کہ کراچی میں کچھ ایسے گروپ سرگرم ہیں جو کراچی کی عوام کو لاوارث سمجھتے ہوئے ان کا پیسہ بٹور کر انہیں بے وقوف بنانا شروع ہو چکے ہیں اور ایسے فراڈئیے گروہ کی نشان دہی حکومت وقت اور حکمران بالا کو کروانا میری ڈیوٹی پے ۔
ہوسٹ کا کہنا تھا کہ دنیا میں نیٹ ورک مارکیٹنگ جس ملک میں بھی ہے وہاں اکانومی بڑی تیزی سے بڑھ رہی ہے اور لوگ مالی لحاظ سے مستحکم ہو رہے ہیں ۔ پاکستان میں اس وقت تین رجسٹرڈ کمپنیز کام کر رہی ہیں ۔ جس میں ٹیانشی انٹرنیشنل کمپنی ، اوریفلیم ، ڈی ایکس این سر فہرست ہیں ۔ ان کے علاوہ تمام کمپنیز جو نیٹ ورک کے نام پر کام کرتی ہیں وہ عوام کو دھوکا دینے کے علاوہ کچھ نہیں ۔
ہوسٹ نے کہا کہ ماضی میں کراچی میں بہت سی ایسی کمپنیز آئیں جنہوں نے کراچی کے سادہ لوح عوام کو خوب لوٹا ان میں سب سے پہلا نام لاثانی گروپ جس نے عوام کو80 ارب کا چونا لگایا اس کے بعد رائل گروپ اور اب جو گروپ عوام کو چونا لگا رہا ہے وہ ہے تھری جینئس ۔ 3 لوگوں پر مشتمل یہ گروپ جس کا CEO قاسم اویس سدھو ڈھائی ارب روپے لے کر پاکستان سے فرار ہو چکا ہے ۔ اس گروپ میں دوسرا نام عمران گلابی جو لاثانی گروپ سے لوٹ کر آیا ہے اور پھر تھری جینئس گروپ کا ممبر بن کر کراچی کی معصوم عوام سے منرل واٹر اور پیمپرز کے نام پر انویسٹمنٹ کروا کے نئے طریقہ واردات کے زریعے لوٹ مار کا بازار گرم کر دیا ۔ کرائے کی نئی چمکتی دمکتی گاڑیاں اور کرائے کے گارڈذ کے پروٹوکول کے دکھاوے کے ساتھ لوگوں کے مالی خوشحالی کے خوابوں سے کھیلنا شروع کر دیا ہے اور حکام بالا خواب خرگوش کے مزے لے رہے ہیں اور کسی بڑی تباہی کا انتظار کر رہے ہیں ۔
ذرائع کے مطابق تھری جینئس گروپ آف کمپنیز یہ دعوی کرتی ہے کہ 2 لاکھ کی انویسٹمنٹ پر 20 سے 25 ہزار ماہانہ گھر بیٹھے کمائیں تو اب تک ماہانہ انکم کی لالچ میں پچھلے ڈیڑھ سالوں سے عوام سے اربوں روپیہ بٹورا جا چکا ہے ۔ کمپنی کی انہی مشکوک حرکات پر نیب لاہور نے بھرپور ایکشن لیا ، اخبارات اور چینلز پر عوام کی آگاہی کے لئے اشتہارات جاری کئے گئے ۔ نیب کے متحرک ہونے کے ساتھ ہی کمپنی کے سی ای او قاسم اویس سدھو راتوں رات ملک سے فرار ہو گئے اور اس وقت دبئی میں مقیم ہیں اور نیب لاہور کی ٹیم کو مطلوب ہیں ۔ یہی ٹولہ پچھلے چھ ماہ سے کراچی میں نئے نام سے داخل ہو چکا ہے جو کہ تھری جینئس سے تبدیل ہو کر نیٹ ورلڈ کے نام سے عوام سے پیسہ بٹورنے میں مصروف عمل ہے جو کہ عمران گلابی ( لاثانی گروپ کے مفرور ) کی سربراہی میں عوام کے کروڑوں روپے بٹورنے مین کامیاب ہو چکےہیں۔ کمپنی ہر چند ماہ بعد نئے پراجیکٹس جیسے حیدرآبار کے قریب غیر قانونی سوسائٹی کا پروجیکٹ ، پے گولڈ ، کیو ورلڈ ۔۔۔۔۔۔۔۔ جاری ہے ۔
پروگرام ڈیوٹی کئی اقساط پر مشتمل ہے اور ہر ہفتے کی شام پر باغی ٹی وی پر نشر کیا جاتا ہے مزید دیگر اقساط کے ساتھ خبر نشر ہوتی رہے گی ۔