کراچی پاکستان کا بدترین شہر بن چکا، سپریم کورٹ سندھ حکومت پر برہم

سپریم کورٹ نے سندھ حکومت پر اظہار برہمی کرتے ہوئے کہا کہ افسوس کے ساتھ کہہ رہا ہوں کہ کراچی پاکستان کا بدترین شہر بن چکا ہے

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق سپریم کورٹ میں اسلام آباد:سپریم کورٹ میں امل عمرقتل کیس کی سماعت جسٹس گلزاراحمد کی سربراہی میں 3رکنی بنچ نے کی ، امل عمر کے وکیل نے کہا کہ رپورٹ میں پولیس،ریگولیٹراور اسپتال پرذمے داری کا تعین ہوناتھا، رپورٹ پرعمل کرتے ہوئے سندھ پولیس کوپٹرولنگ میں بھاری اسلحہ کےاستعمال سے روک دیا گیا ہے .پولیس نےرپورٹ میں غلطی کوتسلیم کیا ہے ، جس پر جسٹس گلزار احمد نے کہا ہے کہ اس کیس کازیادہ پس منظر نہیں جانتے،غلطی ماننا توٹھیک لیکن کیا اسلحہ کے استعمال سے روکنا کراچی جیسے شہرمیں ٹھیک ہوگا ؟ کیاحالات کے مد نظرکراچی میں اسلحے کے استعمال سےپولیس کوروکا جا سکتا ہے، امل عمر کے والدین کے وکیل نے کہا کہ دنیاکےکئی ممالک میں پٹرولنگ پولیس کومشین گنزجیسا اسلحہ نہیں دیا جاتا،

دوران سماعت سندھ حکومت کے وکیل نے کہا کہ عدالت کےسامنے اہم ایشوپراپناموقف دیناچاہتاہوں، جس پرسپریم کورٹ نے سندھ حکومت کی کارکردگی پرعدم اعتمادکااظہار کردیا .جسٹس گلزار احمد نے کہا کہ سندھ حکومت کےپاس توکسی مسئلے کاحل نہیں ہوتاآپ بات مت کریں،سندھ حکومت کاحال توبہت براہے،افسوس کےساتھ کہہ رہا ہوں کراچی پاکستان کابدترین شہربن چکاہے ،جسٹس گلزار احمد کا مزید کہنا تھا کہ کراچی شہرمیں کوئی حکومت نہیں ،پہلے ہم گھر سےدورجا کر کھیلتےتھے،آج کراچی میں ہمارے بچےگھر سےنکل بھی نہیں سکتے.

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.