fbpx

عمران خان کی "احتجاج کال” زبردست تھی، کشمیر ایکٹوسٹ

لاہور: کشمیر ایکٹوسٹ شائستہ صافی نے عمران خان کے احتجاج کی کال پر تعریف کوتے ہوئے کہا کہ ہم جانتے ہیں اس احتجاج سے کشمیر آزاد نہیں ہوگا لیکن جس طرح پاکستانی باہر نکلیں ہیں، یہ ایک بڑے بھائی نے اپنے چھوٹے بھائی کو یکجہتی کا پیغام دیا ہے. لیکن اب دیکھنا ہوگا کہ حکومت پاکستان کی جانب سے اگلی حکمت عملی کیا ہوگی.

تفصیلات کے مطابق کشمیر ایکٹوسٹ شائستہ صافی نے نجی ٹی وی کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ 1947 سے کشمیر کا مسئلہ دنیا کے سامنے اٹھایا گیا، اس وقت دنیا نہیں جانتی تھی کہ کشمیر کا اصل مسئلہ کیا ہے لیکن پھر بھی ہمیں حل بتایا گیا. ساتھ ہی انہوں نے انٹرنیشل میڈیا کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ جتنی کوریج کشمیر کا اس دفعہ ملی ہے، تاریخ میں کبھی نہیں ملی. اس بار بی بی سی، سی این این، نیویارک ٹائمز اور الجزیرہ سمیت دنیا کے تمام میڈیا چینلز نے کشمیر ایشو کو اجاگر کیا. انہوں نے کہا مسلسل 25واں دن ہے وہ بھی اپنی فیملی سے رابطے میں نہیں ہیں، انہیں نہیں پتا کہ ان کی فیملی میں کون زندہ ہے اور کون نہیں؟

ساتھ ہی انہوں نے کہا کہ کشمیر میں 25 روز سے کرفیو نافذ ہے، اور وہاں کے لوگ یہ بھی نہیں جانتے کہ ان کے پڑوس میں لوگ زندہ بھی ہیں یا نہیں، مسلسل 25واں دن ہے وہ بھی اپنی فیملی سے رابطے میں نہیں ہیں، انہیں نہیں پتا کہ ان کی فیملی میں کون زندہ ہے اور کون نہیں؟