ورلڈ ہیڈر ایڈ

کون کھلاڑی کیا کھاتا ہے ، اور کون کیا نہیں‌کھاتا، کرکٹ ٹیم کے شیف کاظم حسین نے سب کچھ بتادیا

لاہور : پاکستان کرکٹ ٹیم کا کون کھلاڑی کیا کھانے کو پسند کرتا ہے اور کون کیا پسند نہیں‌کرتا ،پاکستان کرکٹ ٹیم کے شیف کاظم حسین نے پاکستانی کرکٹ کھلاڑیوں کی دسترخوان پر تمام سرگرمیوں کا انکشاف کردیا ،

اطلاعات کے مطابق کھلاڑيوں کو صحت مند غذا کي فراہمي کو يقيني بنانے والے شيف کاظم حسین وہ شخص جو کرکٹرز کي اچھی طرح سے پرورش میں يقين رکھتا ہے۔ امام الحق غذا کے بارے میں سب سے زیادہ محتاط ہيں جبکہ محمد عرفان کھانے سے محبت کرتے ہیں۔ شعيب ملک ، سبز مرچ پاستا کے شيدائي ہيں

شیف کاظم حسین کہتے ہیں‌کہ یہ دلیل دی جاتی ہے کہ اسپورٹس پرسن کی صحت کا سب سے اہم پہلو کھانا ہے۔ یہ ایندھن ہے ، جو مطلوبہ حرارے فراہم کرتا ہے جو ایتھلیٹ کے ليے ضروري ہوتي ہے۔ لاہور میں نیشنل کرکٹ اکیڈمی (این سی اے) میں ، گزشتہ 13 سالوں سے کاظم حسین اس بات کا یقین کر رہے ہیں کہ ملک کے ایلیٹ کرکٹرز ٹاپ کرکٹ کے چیلنجوں کو برداشت کرنے کے لئے ضروری غذا فراہم کريں۔

باغی ٹی وی کے مطابق 2006 کی بات ہے جب کاظم ، جو اب پی سی بی کے ایگزیکٹو شیف ہیں نے این سی اے کے باورچی خانے کی لگام سنبھالی۔ کاظم کا کہنا تھا کہ اين سي اے کے کھانے ميں ایسی لذت ہے کہ ہمارے کرکٹر بین الاقوامی سیریز کے دوران فائیو اسٹار ہوٹلوں میں رہنے کے باوجود این سی اے میں کھانے کو ترجیح دیتے ہیں۔

پاکستانی کرکٹ ٹیم کے شیف کا کہنا تھا کہ اپنی والدہ سے متاثر ہوکر کھانا پکانا شروع کيا۔ اٹھاون سالہ کاظم نے بتایا کہ وہ کالج سے گھر واپسی پر لنچ کی تیاری میں اپنی والدہ کی مدد کرتا تھا۔ اپنی صلاحیتوں کو جلا بخشنے کے لئے کاظم اين سي اے کي نو شیفوں کی ٹیم کی رہنمائی کرتا ہے

پاکستان کرکٹ ٹیم کے شیف کاظم حسین نے 1993 میں اپنے پیشے میں تبدیل ہونے سے پہلے باورچی خانے سے متعلق کورسز لیا۔ کئی سالوں کے دوران کاظم نے بین الاقوامی ممالک میں پاکستاني کھانا پیش کیا۔ ان کا کہنا ہے کہ لمبے تڑنگے تیز باولر محمد عرفان کو بڑی بھوک لگتی ہے۔ تو اس وقت اس کو جو بھی مل جاے وہ خوب کھاتا ہے

شیف کاظم حسین نے کہا شعیب ملک ہری مرچوں سے بنا پاستا شوق سے کھانا پسند کرتے ہیں اور جب بھی وہ این سی اے میں ہوتا ہے اس کو اس کا پسندیدہ پاستا پیش کیا جاتا ہے۔ کاظم کے نزدیک امام الحق کھانے پينے کے معمالے میں سب سے زیادہ سمجھدار ہیں۔

کاظم حسین کا کہنا ہے کہ امام الحق اپنے کھانے پينے پر خصوصي توجہ ديتے ہيں اور کھانے کے وقت صرف پھل اور دہی ان کي مرخوب غذا ہوتي ہے۔ اگرچہ کاظم نے معروف کرکٹرز کو اپنا کھانا پیش کیا ، لیکن ایک شخص باقی ہے جس کے لئے وہ کھانا پکانا چاہتا ہے۔

کاظم حسین کہتے ہیں‌کہ میں نے بہت سارے عظیم کھلاڑیوں اور کرکٹ ایڈمنسٹریٹر جیسے انتخاب عالم ، راشد لطیف اور وقار یونس کے لئے کھانا پکایا ہے۔ لیکن میری خواہش ہے کہ وہ پاکستان کے وزیر اعظم عمران خان کو اپنے ہاتھ سے کھانا بنا کر پیش کریں۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.