خبر دینے والوں کی خبر بن گئی، 53 صحافیوں میں ہوئی کرونا وائرس کی تشخیص

خبر دینے والوں کی خبر بن گئی، 53 صحافیوں میں ہوئی کرونا وائرس کی تشخیص

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق کرونا وائرس کے دنیا بھر کی طرح بھارت میں بھی وار جاری ہیں

بھارت کے علاقے ممبئی میں 53 صحافیوں میں کرونا وائرس کی تشخیص ہوئی ہے، ممبئی میں 168 صحافیوں کا کرونا کا ٹیسٹ کرویا گیا جن میں سے 53 کا ٹیسٹ مثبت نکلا، جن صحافیوں کے ٹیسٹ مثبت آئے ان کا بھارتی نیوز چینلز، اخبارات سے تعلق ہے، وہ صحافی کرونا کے حوالہ سے مختلف ہسپتالوں، قرنطینہ مراکز سمیت دیگر ایونٹس کو کور کر رہے تھے،

53 صحافیوں میں کرونا وائرس کی تشخیص کے بعد صحافیوں میں خوف کی لہر دوڑ گئی، جن صحافیوں میں کرونا کی تشخیص ہوئی ان میں سے اکثر کو گھروں میں قرنطینہ کر دیا گیا ہے ،جبکہ کچھ کو ہسپتالوں میں رکھا گیا ہے، صحافیوں میں کرونا کے کیسز سامنے آنے کے بعد ان کے ساتھ کام کرنے والے دیگر افراد اور ان صحافیوں کی جن سے ملاقات ہوئی ان سب کے ٹیسٹ کروانے کا فیصلہ کیا گیا ہے، اس ضمن میں مقامی حکومت نے ان صحافیوں سے معلومات لینا شروع کر دی گئی ہیں

صحافیوں میں وائرس کی تشخیص کے بعد انکے اہلخانہ کے بھی ٹیسٹ کروائے جائیں گے،کچھ صحافیوں کے اہلخانہ کو قرنطینہ مراکز میں بھیج دیا گیا ہے،مقامی حکومت نے میڈیا کے ان اداروں جن کے نمائندوں میں کرونا پھیلا وہاں سب کے ٹیسٹ کروانے کا بھی فیصلہ کیا ہے.

قبل ازیں ممئی بھارت میں 100 سے زائد ڈاکٹروں، اتنے ہی پولیس اہلکار، بھارتی فوج، نیوی کے اہلکاروں میں بھی کرونا وائرس کی تشخیص ہو چکی ہے.

کرونا لاک ڈاؤن، شادی کی خواہش رہی ادھوری، پولیس نے دولہا کو جیل پہنچا دیا

کرونا لاک ڈاؤن، گھر میں فاقے، ماں نے 5 بچوں کو تالاب میں پھینک دیا،سب کی ہوئی موت

کرونا میں مرد کو ہمبستری سے روکنا گناہ یا ثواب

لاک ڈاؤن ختم کیا جائے، شوہر کے دن رات ہمبستری سے تنگ خاتون کا مطالبہ

لاک ڈاؤن، فاقوں سے تنگ بھارتی شہریوں نے ترنگے کو پاؤں تلے روند ڈالا

کرونا مریض اہم، شادی پھر بھی ہو سکتی ہے، خاتون ڈاکٹر شادی چھوڑ کر ہسپتال پہنچ گئی

کرونا لاک ڈاؤن، رات میں بچوں نے کیا کام شروع کر دیا؟ والدین ہوئے پریشان

لاک ڈاؤن ہے تو کیا ہوا،شادی نہیں رک سکتی، دولہا دلہن نے ماسک پہن کے کر لی شادی

کوئی بھوکا نہ سوئے، مودی کے احمد آباد گجرات کے مندروں میں مسلمانوں نے کیا راشن تقسیم

واضح رہے کہ بھارت میں کورونا وائرس سے متاثرہ افراد اور ہلاک ہونے والوں کی تعداد میں مسلسل اضافے کے تناظر میں وزیر اعظم نریندر مودی نے 21 روزہ لاک ڈاؤن میں توسیع کرتے ہوئے اسے 3 مئی تک بڑھانے کا اعلان کیا ہے۔ مودی نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ہم تمام لوگوں کو 3 مئی تک لاک ڈاؤن میں رہنا ہو گا۔ اس دوران ہمیں اسی طرح نظم و ضبط پر عمل کرنا ہوگا جیسا کہ ہم اب تک کرتے رہے ہیں۔ اگلے ایک ہفتے کے دوران کورونا کے خلاف جنگ میں مزید شدت پیدا کی جائے گی۔ 20اپریل تک ہر قصبے، ہرتھانے، ہر ضلع اور ہر ریاست پر نگاہ رکھی جائے گی کہ وہاں لاک ڈاؤن پر کتنا عمل ہو رہا ہے

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.