fbpx

خانیوال کی صحافتی برادری احتجاج کرنے پر مجبور

خانیوال ورکنگ صحافیوں کا سٸنیر ورکنگ جرنلیسٹ فورم کے مرکزی آفس خانیوال کے آگے ڈسٹرکٹ پریس کلب کے غیر آٸینی عمل اور اور جعلی کابینہ کے خلاف ایک احتجاجی جلسہ ھوا۔

جلسہ میں خانیوال سٹی کے تمام ورکنگ صحافیوں نے بھر پور حصہ لیا بلکہ اپنا حق لینے کے لے ھر حد کو پار کرنے کے بیان بھی دٸیے صحافیوں کی ایک بڑی تعداد نے اس احتجاج میں یہ ثابت کر دیا کہ جس کمیونٹی کے ممبرکی اتنی تعداد ھو اس کے فیصلے کوٸی بھی دو چار لوگ نہیں کر سکتے یہ کسی بھی قانون یا آٸین نہیں ھے اور اگر وہ کریں تو وہ فیک جعلی اور اسکی کوٸی اہمیت نہیں ھوتی یہ بات دو د ن کا ٹاٸم لینے والے بڑے بھی جانتے ھیں جو ابھی تک خاموش ھیں۔

کثیر تعداد ورکنگ صحافی اپنا حق لینے کے لیے ھر حربہ استعمال کریں گے اگر انتظامیہ نے انکا ساتھ نہ دیا اور اسکی ذمہ دار انتظامیہ اور یہ جعلی کابینہ ھو گی اور اب کوٸی لولی پاپ نہیں ھوگا صرف الیکشن ھوگا اور مکمل ممبران کی لسٹ پے ھوگا سب انسان برابر ھیں سب ورکنگ صحافی ھمارے بازوں ھیں کوٸی آسمان سے اترا فرشتہ نہیں جو اپنے آپ کو اعلی درجہ دے کر سارے فیصلے کرے۔ ھم اپنا حق لے کے رھیں گے