fbpx

کھیتوں میں بکریاں کیوں آئیں؟زمیندار نے 14 سالہ چرواہے کو پھانسی دیدی

مظفرگڑھ : زمیندار نے کھیتوں میں بکریاں لانے پر 14 سالہ چرواہے کو پھانسی دے کر مار ڈالا۔

باغی ٹی وی : تفصیلات کے مطابق یہ واقعہ مظفر گڑھ کی تحصیل علی پور میں پیش آیا جہاں زمیندار نے کھیتوں میں بکریاں چرانے پر زمیندار فیاض غزلانی نے بچے پر تشدد کر کے اسے درخت سے لٹکا کر پھانسی دے دی۔

گھر میں گھس کر ایک ہی خاندان کے 5 افرادکے گلے کاٹ دیئے گئے

زمیندار کی جانب سے 14 سالہ حافظ قرآن پر تشدد اور پھانسی دینے پر اہل علاقہ مشتعل ہوگئے اور کئی بار پولیس سے رابطہ کیا لیکن پولیس نے بااثر زمیندار کو گرفتار کرنے سے گریز کیا جس پر اہل علاقہ نے زمیندار کے گھر پر حملہ کرکے اسے تشدد کا نشانہ بنایا اور پولیس کے حوالے کردیا۔

پولیس نے 14 سالہ محسن کی نعش کو درخت سے اتار کر پوسٹ مارٹم کرانے کے بعد مقدمہ درج کرلیا اور زمیندار کو گرفتار کرکے تفتیش شروع کردی۔

قبل ازیں بھارتی ریاست اترپردیشن کے علاقے پریاگ راج کے تھانہ تھروائی کی حدود میں ملزمان نے گھر میں گھس کر ایک ہی خاندان کے پانچ افراد کو ذبح کر دیا تھا بعد ازاں ملزمان نے لاشوں کو جلانے کے لئے گھر کو آگ لگا دی اور موقع سے فرار ہو گئے آگ لگنے پر اہل محلہ جاگ گئے اور آگ بجھانے کی کوشش کی،اس دوران پتہ چلا کہ گھرکے مکینوں کو قتل کیا گیا ہے-

بھارت میں 13 سالہ کمسن لڑکی سے 8 ماہ تک 80 سے زائد افراد کی اجتماعی زیادتی

 

واضح رہے کہ اس سے پہلے بھی مذکورہ گاؤں میں ایک ایسا ہی اجتماعی قتل کا واقعہ پیش آیا تھا اس میں بھی پانچ افراد کو قتل کیا گیا تھا، رواں ماہ 16 اپریل کو ایک ہی گھر کے پانچ افراد کی لاشیں ملیں تھیں، 3 لڑکیوں سمیت پانچ افراد کو تیز دھار آلے کے ساتھ ہی قتل کیا گیا تھا، جس کے ملزمان ابھی تک گرفتار نہیں ہو سکے ہیں

11سالہ بچے کے قتل کی لرزہ خیز واردات، آنکھیں نوچنے کے بعد کلہاڑی سے لاش کے ٹکڑے…