کھلے دودھ میں‌ کیا ملایا جارہا ہے؟ لاہور میں کتنے پاسچرائزیشن پلانٹ لگائے جارہے ہیں؟ فوڈ اتھارٹی نے بتا دیا

ڈی جی فوڈاتھارٹی محمد عثمان نے کہا ہے کہ لاہور میں ساڑھے چار ہزار پاسچرائزیشن پلانٹ لگائے جائیں گے، پلانٹس میں خالص دودھ تیار ہو گا جو بین الاقوامی معیار کے مطابق ہو گا،سب سے پہلے لاہور میں پاسچرائزیشن والا دودھ فروخت کریں گے.

باغی ٹی وی کی رپورٹ‌کے مطابق ڈی جی فوڈ اتھارٹی نے کہاکہ میرا وعدہ ہے کہ قوم کو غیر معیاری دودھ سے نجات دلا کر ہی رہوں گا،
کھلادودھ کسی بھی حوالےسےانسانی صحت کےلیےدرست نہیں ہے. پنجاب میں آگاہی مہم کا آغازکردیاگیا ہے. آج بھی پیکنگ کے باوجود پاسچرائزیشن والادودھ مارکیٹ میں دستیاب نہیں.

ان کا کہنا تھا کہ 2022میں اربن علاقوں میں پاسچرائزیشن دودھ کی فروخت شروع کردی جائےگی.غیرمعیاری دودھ کی وجہ سےبچوں کی ہڈیاں مضبوط نہیں ہوتیں. انہوں نے کہاکہ کھلےدودھ میں کیمیکلزکی ملاوٹ سے موذی امراض جنم لےرہے ہیں. واضح رہے کہ حکومت کی جانب سے کیمیمل ملا دودھ فروخت سے روکنے کی کوششیں کی جارہی ہیں تاہم انتظامیہ اس سلسلہ میں مکمل طور پر ناکام ہے.

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.