خوشی و غم کی ہم نوا، ہر موڑ پہ ہم دعائیں ہیں بقلم: جویریہ بتول

ہم ہیں بیٹیاں……!!!
( بقلم: جویریہ بتول).
ہم ہیں بیٹیاں …ہم بہنیں…ہم مائیں ہیں…!!!
جس روپ میں ہوں ہم،ہر صورت ہی وفائیں ہیں…
ہیں پیکرِ صبر و رضا،چٹان سی ہے ہر ایک اَدا…
خوشی و غم کی ہم نوا،ہر موڑ پہ ہم دعائیں ہیں…
ہر انسان ہی پلتا ہے ان رِشتوں کی گودوں میں…
اِن ہاتھوں میں راحت ہے،یہ ہر درد کی دوائیں ہیں…
ہم عزت ہیں…ہم رفعت ہیں…ہم رحمت ہیں…
گھر بھر کی برکت ہم سے،وطن کی ہم ردائیں ہیں…
قوم کا مستقبل ہے وابستہ ہماری فکر و عمل سے…
روشن دیے ہیں ذہن میں یا چھائی دل پہ خزائیں ہیں؟
ان گودوں میں پَل کر ہی شاہین پرواز بھرتے ہیں…
اسی تربیت میں غفلت کی ملتی کڑی سزائیں ہیں…
ہم میں سے ہر ایک کو ملا مقام بلند سے بلند تَر ہے…
جس زاویے سے دیکھیں خود کو جنت کی ہم ہوائیں ہیں…
==============================

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.