میری خواہش ہے کہ میرا بیٹا بھارت جیسے ملک میں گلوکار نہ بنے سونو نگم

بھارتی گلوکار سونو نگم کا کہنا ہے کہ میرا بیٹا پیدائشی گلوکارلیکن میری خواہش ہے کہ کم از کم وہ بھارت جیسے ملک میں گلوکار نہ بنے-

باغی ٹی وی : سونو نگم نے اپنے حالیہ انٹرویو میں کہا ہے کہ وہ نہیں چاہتے کہ ان کا بیٹا بھارت میں گلوکاری کرے-

بھارتی میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے سونو نگم نے بیٹے نیوان نگم کے حوالے سے کہا کہ سچ کہوں تو میں نہیں چاہتا کہ میرا بیٹا گلوکار بنے کم از کم اس ملک (بھارت) میں تو نہیں، ویسے بھی وہ اب بھارت میں نہیں دبئی میں رہتا ہے۔

سونگم نے یہ بھی کہا کہ میرا بیٹا نیوان نگم پیدائشی طور پر گلوکار ہے لیکن اسے اپنی زندگی میں کسی اور کاموں میں دلچسپی ہے وہ مشہور گیم ’فارتھ نائٹ‘ کا بہترین کھلاڑی ہے اور اس کا شمار متحدہ عرب امارات کے بہترین کھلاڑیوں میں ہوتا ہے-

مائیکل جیکسن کی بیٹی کا پہلا میوزک البم شائقین کو متاثر کرنے میں ناکام

سونو نگم نے کہا کہ وہ لازوال صلاحیتوں سے بھرپور بچہ ہے اسی لیے میں اسے بتانا نہیں چاہتا کہ اسے اپنی زندگی میں کیا کرنا ہے- دیکھتے ہیں کہ وہ خود اپنے لیے کیا کرتا ہے۔

خیال رہے کہ سوشانت سنگھ راجپوت کیس میں اقراباپروری پر بھی سونو نگم نے اپنا مضبوط موقف پیش کیا تھا اور بالی وڈ میں اقراباپروری کے حوالے سے کئی انکشاف بھی کئے تھے سونونگم نے اپنی ہی میوزک انڈسٹری کے حوالے سے تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے کہا تھا کہ ٹی سیریز کے بھوشن کمار میوزک انڈسٹری کا مافیا ہے وہ میرے خلاف لوگوں کو لکھنے کا کہتے ہیں یہاں تک کہ دیگر گلوکاروں کو میری مخالفت میں انٹرویو دینے کا کہتے ہیں۔

مجھے بھی برطانیہ میں دیگر پاکستانیوں کی طرح نسل پرستی کا سامنا کرنا پڑا

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.