fbpx

لاہور میں چاروں سیٹیں جیتیں گے،اسد عمر

پاکستان تحریک انصاف کے مرکزی سیکرٹری جنرل اسد عمر۔ریاض فتیانہ۔ صدر سینٹرل پنجاب ڈاکٹر یاسمین راشد۔جنرل سیکرٹری سینٹرل پنجاب حماد اظہر ۔فیاض الحسن چوہان ۔ شوکت بھٹی کا پی پی 167 جوہرٹاؤن۔ پی پی 168 آشیانہ روڈ۔ پی پی 170 نیسپاک اور پی پی 140 شیخوپورہ کے ورکرز کنونشن سے خطاب کرتے ھوئے کہاکہ شبیر گجر کی انتخابی مہم بہت اچھی جا رہی ہے۔ 17 جولائی کو سب اپنی ذمہ داری پوری کرے ۔اگر ہم نے اپنی ذمہ داری پوری کر لی تو کوئی ہمیں جیت سے کوئی نہیں روک سکتا۔

انہوں نے کہا کہ حکمرانوں نے نیب کے قانون میں ترمیم کر کے اپنے آپ کو بچا لیا۔الیکش کے روز اپنے ڈبے کی حفاظت کرنی ہے۔ اس بار ایک نئی تاریخ رقم ہونے جارہی ہے ہم لاہور میں چاروں سیٹیں جیتیں گے ۔وقت آگیا ہے یہ جو ہمیں نالائق کہتے تھے اب ان کی وجہ سے ہر کوئی پریشان ہے ۔گھر گھر سے ووٹ نکالیں اور پھر پولنگ سٹیشن ہو آخری وقت تک رہیں۔ہمارے ساتھ اللہ اور عوام ہے۔ یہ الیکش ہمارے لئے بہت اہم ہے یہ حکومت پاکستان کی خوداری کو بیچ کر اقتدار میں آئی ھے۔ ان کا راستہ روکنا ضروری اور ممکن بھی ہے۔اداروں کو ختم کرنے اور احتساب سے بچنا چاہتے ہیں۔ابھی ہمارے وقت ہے ہمیں منظم ہو کر الیکشن لڑنا ہے۔پولنگ ڈے پر لوگوں کو گھروں سے نکالنا ہے۔

رہنماؤں نے کہاکہ شبیر گجرہمارے امیدوار ہیں جوتحریک انصاف کی سوچ کے مطابق چلتے ہیں۔ہماری سوچ ہے کہ نچلی سطح سے لوگوں کو اوپر لانا ہے ۔پہلے یہ حکومت مہنگائی کے خلاف مظاہرے کرتی تھی اب بلاول بھٹو کہاں ہے۔ یہ مہنگائی کم کرنے نہین بلکہ اپنے لئے این آر او لینے آئے ہیں جو وہ آئین میں ترامیم کر کے لے رہے ہیں۔ساڑھے تین سال کا عرصہ بہت مشکل تھا سو ارب روپے کا خسارہ ملا اربوں روپے کے چیک باونس ہو چکے تھے۔ ہم نے ایک سال میں تیس فیصد آبادی کو صحت کارڈ دئیے پھر پنجاب کے ہر خاندان کو دئیے جس میں دس لاکھ روپے علاج کے لئے تھے۔ ہم نے کرونا کو سنبھالا بھارت میں لوگ سسکیاں لے کر مر رہے تھے۔ عمران خان نے کہا کہ لاک ڈاؤن نہ کریں ورنہ لوگ بھوکے مر جاتے صرف سمارٹ لاک ڈاوان لگایا تین ارب روپے کی ویکسین خریدی۔عمران خان کی سوچ غربت کی سطح کی نچلی کے لوگوں کو اوپر لانا ہے۔غریب لوگ کے لئے صحت کارڈ پناہ گاہیں اور آحساس کارڈ دئیے گئے تھے۔ہم عمران خان کے ساتھ سیسہ پلائی دیوار کی طرح ساتھ ہیں۔یہ ترقیاتی کام کررہے ہین چلو خیر ہے ہمارے لوگوں کے کام ہو رہے ہیں۔ 17جولائی کو تحریک انصاف جیتے گی ہم 17 کو اپنے ووٹ کی رکھوالی بھی کریں گے اور پہرہ بھی دیں گے۔ سب لوگ اس روز نکلیں کوئی گھر میں نہ بیٹھے انشااللہ ہماری جیت ہو گی۔ مہنگائی بہت زیادہ ہو چکی ہے۔

مہنگائی کا نتیجہ سترہ جولائی کو نکلے گا ۔حق لیا نہیں جاتا چھین لیا جاتا ھے۔ سترہ جولائی کو جیت ٹحریک انصاف کی ہی ہو گی۔ انہوں نے کہاکہ نذیر چوہان چھ بار ووٹ کی عزت رول چکے ہیں اب پھرلوٹا ہو گئے۔ آج ہم اس وقت سترہ جولائی کے الیکشن کے لئے نہیں جمع نہیں ہیں پہلی بارایک لیڈر نے بتایا کہ اپ قُوم ہے ۔ہمیں امریکہ کے سامنے بولنے کی اجازت نہیں ۔عمران خان نے پیغام دیا کہ ہم غلامی کی زنجیریں توڑیں گے ۔عمران خان پہلا لیڈر آیا جس نے ناموس رسالت اور ناموس پاکستان اور ناموس عوام کی بات کی۔ لاہور میں ن لیگ ککڑی لیگ اگر سمجھتے ہیں کہ وہ دھونس اور بدمعاشی سے جیت جائیں گے اور غلط فہمی کا شکار ہے ۔اس پارٹی کو کوئی جھکا اور دبا نہیں سکتا ۔الیکشن ڈے کو ایزی نہیں لینا۔ ہم سب کو پتہ ہے کہ الیکن کیسے لڑا جاتا ہے۔

یہ جدوجہد پاکستان کی آزادی کے لئے جہاد ہے۔آپ نے 17 جولائی کو آپ نے گھروں سے باہر نکل کر ووٹ ڈالنے ہیں۔ پولنگ آفیسر سے رزلٹ لے کر ریٹرننگ آفیسر تک پہنچنے تک رکھوالی کرنی ہے۔ پہلے نتیجوں میں آپ جیت رہے ہوں گے مگر اگر آپ نے پہرہ نہ دیا تو نتیجے بدل سکتے ہیں -لوٹوں کو عوام کی طاقت سے عبرتناک شکست دیں گے۔ شکست لوٹوں کا مقدر بن چکی ہے۔ تحریک انصاف ملک کو بچانے کی جنگ لڑ رہی ہے۔ حکمرانوں نے غریب عوام کا جینا مشکل کر دیا ہے۔ ناجائز حکمران غریب عوام کا خون چوس رہے ہیں۔وام مہنگائی کے ہاتھوں پریشان ہیں۔ رہنماؤں کاکہنا تھا کہ عوام تحریک انصاف کے ساتھ کھڑی ہے۔ رہنماؤں نے کہا کہ ناجائز حکمران جھوٹ کا راگ الاپ کر عوام کو بیوقوف نہیں بنا سکتے۔ شریف خاندان اور ان کے حواری قوم کے سامنے بے نقاب ہو چکے ہیں۔ تحریک انصاف نون لیگ کی غنڈہ گردی کا ڈٹ کر مقابلہ کرے گی ۔پی ٹی آئی کے کارکنان اپنے چیئرمین عمران خان کی قیادت میں متحد ہیں۔ ناجائز حکمران ذلیل و رسوا ہو رہے ہیں۔

ورکر کنونشن میں امیدوارشبیر گجر۔ ملک نواز اعوان۔ ملک ظہیر عباس کھوکھر۔ خرم ورک۔ ریاض فتیانہ
حاجی کرامت کھوکھر خالد گجر کنور عمران سعید آصف ورک سعید ورک علی اصغر منڈا ۔ندیم عباس بارا عمر آفتاب ڈھلوں خرم چٹھ علی سلمان رانا وحید معراج خالد گجر رانا عباس ملک اقبال شفقت کچر سمیت ہزاروں کی تعداد میں کارکنان و عہدیداران نے شرکت شرکت کی
شیخ امتیاز محمود زبیر نیازی ڈاکٹر سیمی بخاری یوسف میو عمر ڈار شبیر سیال منشا سندھو سمیت بڑی تعداد میں ہلکے سے کارکنان نے شرکت کی