ایل این جی ریفرنس،شاہد خاقان عباسی سمیت تمام ملزمان بری

0
153
faizabad

احتساب عدالت : سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کے خلاف ایل این کی ریفرنس نیب کیس کی سماعت ہوئی

شاہد خاقان عباسی وکلاء کے ہمراہ عدالت پیش ہوئے،عدالت نے شاہد خاقان عباسی سمیت تمام ملزمان بری کر دیئے،کیس کی سماعت احتساب عدالت کے جج ناصر جاوید رانا نے کی، نیب نے شاہد خاقان عباسی کے خلاف ریفرنس واپس لے لیا ، ڈپٹی پراسیکیوٹر اظہر مقبول نے کہا کہ نیب شاہد خاقان عباسی کیخلاف ریفرنس واپس لے رہا ہے،عدالت نے نیب کی ریفرنس والپس لینے کی درخواست پر فیصلہ سنا دیا

سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کو 18 جولائی 2019 کو قومی احتساب بیورو نے مائع قدرتی گیس کیس میں گرفتار کیا تھا اور انہیں فروری 2020 میں اسلام آباد ہائی کورٹ کی جانب سے ضمانت پر رہا گیا گیا تھا۔ان پر الزام ہےکہ انہوں نے اس وقت قوائد کے خلاف ایل این جی ٹرمینل کے لیے 15 سال کا ٹھیکہ دیا، یہ ٹھیکہ اس وقت دیا گیا تھا جب سابق وزیراعظم نواز شریف کے دور حکومت میں شاہد خاقان عباسی وزیر پیٹرولیم تھے،بعدازاں 3 دسمبر 2019 کو نیب نے احتساب عدالت میں ایل این جی ریفرنس دائر کیا تھا، جس میں سابق وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی، سابق وزیر خزانہ مفتاح اسمٰعیل، پاکستان اسٹیٹ آئل (پی ایس او) کے سابق منیجنگ ڈائریکٹر شیخ عمران الحق اور آئل اینڈ گیس ریگولیٹری اتھارٹی (اوگرا) کے سابق چیئرمین سعید احمد خان سمیت 10 ملزمان کو نامزد کیا گیا تھانیب نے ریفرنس میں قومی خزانے کو 21 ارب روپے کا نقصان پہنچانے کا دعویٰ کیا تھا

بچ کر رہنا،لڑکی اور اشتہاریوں کی مدد سے پنجاب پولیس نے ہنی ٹریپ گینگ بنا لیا

مہنگائی،غربت،عید کے کپڑے مانگنے پر باپ نے بیٹی کی جان لے لی

پسند کی شادی کیلئے شوہر،وطن ،مذہب چھوڑنے والی سیماحیدر بھارت میں بنی تشدد کا نشانہ

پسند کی شادی، عدالت نے لڑکی کو شوہر کے ساتھ جانے کی اجازت دے دی

شادی شدہ خاتون سے معاشقہ،نوجوان کے ساتھ کی گئی بدفعلی،خاتون نے بنائی ویڈیو

بلیک میلنگ کی ملکہ حریم شاہ کا لندن میں نیا”دھندہ”فحاشی کا اڈہ،نازیبا ویڈیو

صحافی عامر سعید عباسی کہتے ہیں کہ نیب نے قطر کے ساتھ ہونے والے معاہدے پر پاکستان لائی گئی ایل این جی پر انکوائری کی، کرپشن الزامات لگائے، شاہد خاقان عباسی، مفتاح اسماعیل سمیت دیگر ملزمان کو گرفتار کیا، جیلوں میں بند کیا، سرمایہ کاروں کو بھگایا، سیاسی شخصیات کو کرپٹ قرار دیا اور آج خاموشی سے ریفرنس واپس لے لیا اور عدالت نے سب کو بری کردیا۔کیا کوئی نیب اور ان عدالتوں سے پوچھ سکتا ہے کہ ملک اور ان لوگوں پر جو ظلم کیا اس کا حساب کون دے گا ؟ کیا یہ عدالتیں انصاف کرتی ہیں یا جو ادارے فیصلہ کرتے ہیں یہ ان کی سہولت کار بن جاتی ہیں ؟

Leave a reply