fbpx

اسلام آباد میں کل بلدیاتی انتخابات نہیں ہوں گے:وزیرداخلہ راناثنااللہ

ہائی کورٹ کے فیصلے پرعمل درآمد ممکن ہیں :راناثنااللہ

اسلام آباد:وزیرداخلہ راناثناء اللہ کا کہنا ہے کہ وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں کل بلدیاتی انتخابات نہیں ہوں گے۔اسلام آباد ہائیکورٹ کے فیصلے پر تبصرہ کرتے ہوئے وزیرداخلہ نے کہا کہ اسلام آباد ہائیکورٹ کا فیصلہ قابل عمل نہیں ہے۔ ہائیکورٹ کے فیصلےکے خلاف انٹرا کورٹ اپیل دائرکریں گے۔

راناثنااللہ نے کہا کہ اسلام آبادمیں ووٹرزکواندراج سےمتعلق بھی بہت سےاعتراضات ہیں جبکہ قانون کے مطابق حلقہ بندیاں بھی ہونی ہیں، بلدیاتی الیکشن کروانے میں4 سے 5 ماہ لگیں گے۔لیگی رہنما نے کہا کہ تحریک انصاف نے اسلام آباد کے بلدیاتی انتخابات میں 2سال سے زائد التواء لیا۔

وفاقی وزیر قانون اعظم نذیر تارڑ کا کہنا ہے کہ اتنے مختصر وقت میں اسلام آباد میں بلدیاتی انتخابات کرانا عملی طور پر ممکن نہیں۔ کہ عدالت نے فیصلہ سنا دیا۔ عملدرآمد کرانا الیکشن کمیشن کا اختیار ہے، اپیل کا آپشن موجود ہے۔

سینیٹر اعظم نذیر تارڑ نے مزید کہا کہ انتخابات کا انعقاد آئینی،جمہوری طریقے سے ہوتا ہے، حکومت نے بھی اجلاس بلا لیا ہے جس میں تمام صورتحال کا جائزہ لیا جائے گا

یاد رہے کہ اس سے پہلے اسلام آباد ہائیکورٹ نے اسلام آباد میں بلدیاتی الیکشن تاخیر سے کرانے کے کیس کا محفوظ فیصلہ سنا دیا ہے، عدالت نے اسلام آباد میں بلدیاتی انتخابات ملتوی کرنے کا الیکشن کمیشن کا فیصلہ کالعدم قرار دے دیا ہے۔

عدالت نے الیکشن کمیشن کو 101یونین کونسلز پر31 دسمبر کو الیکشن کرانے کا حکم دیتے ہوئے ریمارکس دیے کہ الیکشن کمیشن شیڈول کے مطابق انتخابات کرائے