لاک ڈاؤن توسیع، پنجاب میں کیا کھلا ہو گا اور کیا بند؟ نوٹفکیشن جاری

لاک ڈاؤن توسیع، پنجاب میں کیا کھلا ہو گا اور کیا بند؟ نوٹفکیشن جاری

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق پنجاب حکومت نے صوبہ میں کورونا وبا کے پیش نظر 25اپریل تک کیلئے لاک ڈاون کا نوٹیفکیشن جاری کردیا

نوٹیفکیشن پرائمری اینڈ سکینڈری ہیلتھ کیئر ڈیپارٹمنٹ کی جانب سے سیکرٹری پرائمری اینڈ ہیلتھ کیئر ڈیپارٹمنٹ کیپٹن رعثمان نے جاری کیا ، جس کے مطابق تمام مارکیٹس ،شاپنگ مال ،ریسٹورنٹس ،سرکاری ونجی دفاتر بند رہیں گے ،بین الاصوبائی اورایک دوسرے شہر میں لوگوں کی نقل وحرکت پر پابندی رہے گی سماجی ،مذہبی ،تقریبات ،میلوں،سپورٹس فیسٹول ،جم اور سنوکر کلب پر پابندی رہے گی

شادی ہال ،شادی کی تقریبات ،تعلیمی اداروں ،سکولز ،کالجز ،میڈیکل کالجز ،ٹیکنکل اور وکیشنل انسٹی ٹیوٹ ،یونیورسٹیز ،ٹیوشن سینٹرز ،دینی مدارس اورامتحانات پر پابندی رہے گی ۔تمام ایسے سرکاری دفاتر ان کے سرکاری اہکار دفاتر میں جاسکیں گے ۔قانون نافذ کرنے والے ادارے ،ایجنسی اور متعلقہ اداروں کے اہکار فرائض انجام دے سکیں گے ضروری خدمات سرانجام دینے والے اداروں کے ملازمین ڈیوٹی پر جاسکیں گے ۔ یوٹیلٹیز کمپنیز ،واسا ،میوسپلیٹز ،واپڈا ،این ٹی ڈی سی ،ڈسکوز اور ایس این جی پی ایل کے ملازمین کام کرسکیں گے ،موبائل کمپنیز ،فرنچائز اورکسٹمرز سپورٹ کے ضروری افراد ڈیوٹی انجام دے سکیں گے ،پپی ٹی سی ایل اور اس کے ٹاورز پر کام کرنے والے ملازمین کام کرسکیں گے۔

دفاع سے متعلقہ مینوفیکچرنگ انڈسٹری اور پیکنگ فسیلٹی دینے والے ادارے کے ملازمین کام کرسکیں گے ،مائیکروفنانس انسٹی ٹیوشنز کاضروری عملہ پبلک ڈیلنگ کیلئے دفاتر آسکے گا،سیکورٹیز اینڈ ایکسچینجز کمپنی ،سینٹرل ڈیپازٹری کمپنی ،نیشنل کلیئرنگ کمپنی ،مارچنٹائل ایکسچینج کمپنی اپنے کام سٹاف سے کام کرے گی ۔ احساس کفالت پروگرم سمیت دیگر متعلقہ اداروں کاسٹاف بھی اپنے فرائض انجام دے سکے گا۔ فارن ڈپلومیٹس اور ان کے لوکل سٹاف کوکام سے متعلق گھومنے کی اجازت ہوگی ،صحت اور اس سے متعلقہ ادارے جن میں لیبارٹیز اور فارماسوٹیکلز فیکڑیز کوکام کرنے کی اجازت ہوگی ،

نماز جنازہ کی ادائیگی اور اس سے متعلقہ پروگرام کی اجازت ہوگی ۔کال سینٹرز ،ای کامرس بزنس اور لوکل ڈلیوریز کمپنی کو50فیصد سٹاف کی اجازت ہوگی ۔بینک اپنے لازمی سٹاف کے ساتھ کام کرسکیں گے ۔پرچون سٹورز ،جنرل ،کریانہ سٹورز ،بیکریز ،آٹا چکی ،ڈیری شاپس ،چکن اینڈ گوشت ،مچھلی ،فروٹس اور سبزیوں ،تندور ،آٹو ورکشاپس ،ٹائر پنکچرز ،سپیئرز پارٹس ،پیٹرول پمپس اور آئل ڈپو کھلے رہیں گے ۔ یسٹورنٹس کے ٹیک ویز اور ہوم ڈلیوری بھی کھلے رہیں گے ۔ایل پی جی کے آوٹ لیٹس ،فلنگ پلانٹس ،اور سپلائی چینز سٹورز کھلے رہیں گے ۔پوسٹل کورئیر سروسز ،پک اینڈ ڈرپس ڈور سٹیپ تک جانے کی اجازت ہوگی ۔ کسٹم ڈرائی پورٹس آپریشن کوکام کرنے کی اجازت ہوگی ۔نوٹیفکیشن

پولیٹری فیڈ ،پرسنل پروٹیکشن ایکوئیمنٹس بنانے اور سپلائی کرنے کی اجازت ہوگی ۔ فرٹیلائزر کمپنی کے سٹاف کے نقل وحمل کی اجازت ہوگی شناختی کارڈ تصدیق کیلئے لازمی ہوگا ،ریفائنریز کمپنیوں کے بھی سٹاف کوبھی کام کرنے اور ڈسٹری بیوشن کی جازت ہوگی ،ٹریکٹر اور اس کے آلات بنانے والے اداروں ،فارماسٹوٹیکل انڈسٹریز کوکمپنی کرنے کی اجازت ہوگی ،سوڈا ایش انڈسٹری کوکم ازکم سٹاف کے ساتھ کام کرنے کی اجازت ہوگی ۔سیمنٹ پلانٹس کے سٹاف اورانڈسٹری کوکام کرنے کی اجازت ہوگی ۔میڈیا سے متعلقہ افراد اور نیوز ہاکرز کوکام کرنے کی اجازت ہوگی ،وکلا کوکورٹس میں اہم کیسوں میں پیش ہونے کی اجازت ہوگی ۔نوٹیفکیشن

کیمکل ،سافٹ وئیر ڈویلپمنٹ ،پروگرامنگ ،ٹیک سپورٹ کمپنیاں ،الیکڑیشن ،پلمبر ،کارپنٹرز اور درزیوں کوکام کرنے کی انفرادی اجاز ت ہوگی ۔ویٹنری سروسز ،رئیل اسٹیٹس ،بک شاپس ،کلاس مینوفیکچرنگ یونٹ ،پیپر پیکنگ ،ہارٹیکلچرز ،مائنز اینڈ منرل ،روڈ سیکڑ ،کرے سٹکچرز اور متعلقہ اداروں کوکام کرنے کی جازت ہوگی ۔ایکسپورٹ سے متعلقہ انڈسٹری کوایس او پیز کے مطابق کام کرنے کی اجازت ہوگی ۔گھر سے دو افراد پرچون کاسامان ،ادویات ،ڈاکٹر کے پاس جاسکتے ہیں ڈرائیور کے ہمراہ گاڑی میں جاسکتے ہیں ۔جن سٹورز کوکام کرنے کی اجازت ہے ان کوسوشل ڈسٹینس رکھنا ضروری ہے ۔پرچون اور کریانہ سٹورز ،کوصبح نو سے پانچ بجے تک کام کرنے کی اجازت ہوگی ۔دودھ اور گوشت کی دکانیں صبح نو سے رات آٹھ بجے تک کھلی رہیں گی.

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.