fbpx

لوگوں کو بنیادی حقوق سے محروم کرنا کہاں کی جمہوریت ہے؟ سراج الحق

امیر جماعت اسلامی پاکستان سراج الحق نے کہا ہے کہ لوگوں کو بنیادی حقوق سے محروم کرنا کہاں کی جمہوریت ہے؟-

باغی ٹی وی :تفصیلات کے مطابق سراج الحق نے کہا کہجب 3 کروڑ آبادی والے کراچی کے میئر کو اختیارات نہ ملیں تو الیکشن ایکسر سائز کا کیا فائدہ؟ انہوں ںے استفسار کیا کہ کیا کراچی کا میئر صرف جھاڑو پکڑ کر صفائی کرے گا ؟

بہت ہو گیا ہمیں الگ گورنر وزیراعلی چاہیے٫یوسف رضا گیلانی نے جنوبی پنجاب کا مقدمہ اٹھا دیا

امیر جماعت اسلامی پاکستان نے کہا کہ شہری حکومتوں کے قیام کا مقصد نچلے درجے تک اختیارات کی تقسیم ہے لوگوں کو بنیادی حقوق سے محروم کرنا کہاں کی جمہوریت ہے؟پیپلزپارٹی جمہوری جماعت ہے تو 18 دنوں سے سڑک پر بیٹھے لوگوں کی آواز سنے سندھ کا بلدیاتی قانون تمام اسٹیک ہولڈرز کی مشاورت سے بننا چاہیے حکومت سندھ ہٹ دھرمی چھوڑے اور کالا بلدیاتی قانون واپس لے۔

امیر جماعت اسلامی پاکستان سراج الحق نے واضح طور پر کہا کہ جماعت اسلامی کراچی دھرنا جاری رکھے گی۔ ان کا کہنا تھا کہ جماعت اسلامی کراچی کے عوام کے حقوق کا تحفظ چاہتی ہے۔

اگرنون لیگ شریف فیملی سے خودکو علیحدہ ہ کرتی ہے تو یہ مثبت پیشرفت ہوگی ، فواد چودھری

قبل ازیں ایم کیو ایم پاکستان کے سینئر ڈپٹی کنوینر عامر خان نے چیئرمین پاکستان پیپلزپارٹی کو مخاطب کرتے ہوئے کہا تھا کہ بلاول بھٹو صاحب! اپنے جذبات کو قابو میں رکھیں، آپ کو اپنی عمر کے مطابق باتیں کرنی چاہئیں بلاول جتنی آپ کی عمر ہے اتنی ہم نے جیلیں کاٹی ہیں ایم کیو ایم مختلف علاقوں میں احتجاج کررہی ہے اور آج ہماری ماؤں و بہنوں نے بھی احتجاج کرنے کا فیصلہ کیا ہےجب یہ بہنیں نکلتی ہیں تو ہمارا حوصلہ بڑھتا ہے۔

پاکستان میں قازقستان کے سفیر کی جنرل قمر جاوید باجوہ سے ملاقات

ایم کیو ایم پاکستان کے سینئر ڈپٹی کنوینرعامر خان نے کہا تھا کہ تمام سیاسی و مذہبی جماعتوں نے سندھ کے بلدیاتی قانون کومسترد کیا اور کہا کہ ہم اس کالے قانون کو مسترد کرتے ہیں ہم کراچی کے بلدیاتی اداروں کو اختیارات دلوانا چاہتے ہیں ہم دادو اور لاڑکانہ سمیت دیگر اضلاع کے نمائندوں کو بھی ان کا حق دلوانا چاہتے ہیں۔

وزیراعلیٰ ہاؤس کے بعد گورنر ہاؤس بھی جائیں گے، حافظ نعیم الرحمان

عامر خان نے سخت انداز میں پی پی کے رہنماؤں کو مخاطب کرتے ہوئے کہا تھا کہ نفرت اور لسانیت کی سیاست آپ کرتے ہو، ہم نہیں پیپلزپارٹی کا وڈیرہ گینگ تحمل اختیار کرے۔ 2013 کے ایکٹ میں ترمیم کو تسلیم کرنے سے پہلے ہی انکار کر دیا تھاکراچی سے ہر سال صوبائی حکومت 400 ارب روپے کا ٹیکس جمع کرتی ہے۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ ہمارے شہروں کی گندگی صاف کرنے کا انتظام ہمارے حوالے کردواین ایف سی ایوارڈ کا مسئلہ ہو یا دیگر کوئی بھی مسئلہ، حل ہم نکال کر رہیں گے۔

سیالکوٹ بزنس کمیونٹی کیجانب سے پریانتھا کمارا کے اہلخانہ کیلئے 0.1 ملین ڈالر امداد