fbpx

لٹیرے لیڈرز نہیں‌ ہو سکتے مایا علی

چھوٹی اور بڑی سکرین کی بہت ہی پیاری اداکارہ مایا علی بھی گزشتہ روز ہونے والے پنجاب اسمبلی کے انتخاب کے نتائج سے ہیں خفا، انہوں نے بھی سوشل میڈیا پر اپنے غصے کا اظہارکیا. اداکارہ نے کہاکہ لیٹرے ہمارے لیڈرز نہیں‌ہو سکتے. اپنے انسٹاگرام اکائونٹ پر انہوں نے ایک سٹوری لگائی اس میں لکھا کہ میرا دل انصاف اور سسٹم سے اٹھ گیا ہے. اسی طرح سے اداکارہ منال خان نے کہا کہ پاکستان کی تاریخ کا یہ مایوس کن دن ہے. اداکار احسن محسن اکرم نے بھی کہا کہ برائے

مہربانی سپریم کورٹ کے دروازے بھی اسی طرح سے کھولے جائیں جس طرح سے آپ نے عدم اعتماد کی ووٹنگ کے دوران کھولے تھے.آج سپریم کورٹ دیکھے گی کہ عدالتیں نیوٹرل ہیں یا نہیں.پنجاب اسمبلی میں کل ہونے والے انتخاب پر پورے پاکستان کی نظریں تھیں جس جس کی جس جس سیاسی جماعت سے وابستگی تھی انہوں نے اس حساب سے نتائج کو دیکھا.اس وقت ق لیگ اور پی ٹی آئی کے سپورٹرز نہایت ہی غم و غصہ میں ہیں یہاں تک کہ گزشتہ رات ق لیگ کے سپورٹرز نے چوہدری شجاعت کے گھر کا گھیرائو کر کے ان کے خلاف نعرے بازی کی. اسی طرح سے پی ٹی آئی کے سپورٹرز کی بڑی تعداد سپریم کورٹ کے باہر جا کر نعرے بازی کرتی رہی.اب دیکھنا یہ ہے کہ اونٹ کس کروٹ بیٹھتا ہے اور عدالت ان نتائج پر کیا فیصلہ دیتی ہے.