fbpx

ملیر سٹی سے ایم کیو ایم لندن کا دہشتگرد دستی بم سمیت گرفتار۔

کراچی ملیر سٹی سے ایم کیو ایم لندن کا دہشتگرد دستی بم سمیت گرفتار۔

گرفتار ملزم محمد شہزاد عرف کھجی عرف حضرت راسے تربیت یافتہ ہے۔گرفتار دہشتگرد مجموعی طور پر اٹھارہ قتل کی وارداتوں میں ملوث ہے۔ملزم نے 1988 میں متحدہ لندن میں بطور کارکن شاہ فیصل سیکٹر 104 میں شمولیت اختیار کی۔ملزم شہزاد 1993 میں نعیم شری کی ٹارگٹ کلنگ ٹیم میں شامل ہوا۔
17 اکتوبر 1994کو ملزم نے اپنے ساتھیوں کے ہمراہ سب انسپکٹر محمد اسلم اور پولیس کانسٹیبل محمد ایوب کو فائرنگ کر کےشہید کیا۔حملے میں ڈی ایس پی مختیار احمد چوہدری بھی زخمی ہو گئے تھے۔ملزم نےرضا اسکوائر گلشن اقبال میں پیدل گشت پر مامور پولیس اہلکاروں کو فائرنگ کر کے شہیدکرنے کابھی انکشاف کیا۔گرفتار دہشتگرد نے 1995 میں موسی کالونی کے رہائشی چھ افراد کو مخبری کے شبے میں اغواء کے بعد تشدد کر کے قتل کرنے کا انکشاف کیا۔

گرفتار دہشتگرد 1996 کراچی میں آپریشن کے دوران گرفتاری کے ڈر سے شہر کے مختلف علاقوں میں روپوش رہا اور پھر تنظیم کیجانب سے ساوتھ افریقہ بھیج دیا گیا۔گرفتار ملزم کو متحدہ لندن کی قیادت کے حکم پر ساتھیوں کے ہمراہ سال 2000 میں انڈین خفیہ ایجنسی را سے تربیت کیلئے انڈیا دہلی بھیجا گیا۔گرفتار ملزم انڈیا سے تربیت کے بعد واپسی پر کراچی میں سیاسی و مذہبی افراد کے قتل اور اقدام قتل کی وارداتوں میں ملوث رہا۔گرفتار ملزم سےمزید پوچھ گچھ جاری ہےمزید انکشافات اور گرفتاریاں متوقع۔ملزم کیخلاف انسدادی دہشتگردی سمیت دیگر دفعات کے تحت مقدمہ درج کر لیا گیا۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.