fbpx

مریم کی چھٹی، ہم کس سے رابطہ کریں گے، بلاول کے اعلان نے مولانا کو بھی حیرت میں ڈال دیا

مریم کی چھٹی، ہم کس سے رابطہ کریں گے، بلاول کے اعلان نے مولانا کو بھی حیرت میں ڈال دیا

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول زرداری نے مریم نواز کی چھٹی کروا دی، کہتے ہیں ہم پارلیمانی سیاست پر یقین رکھتے ہیں، شہباز شریف اور حمزہ دونوں قائد حزب اختلاف ہیں، دونوں سے رابطہ رکھیں گے

بلاول زرداری کا کہنا تھا کہ کہا تھا عثمان بزدار کیخلاف تحریک عدم اعتماد لائیں ،کٹھ پتلی نظام ختم ہوجائیگا، پنجاب اور وفاق میں حکومت کی اپوزیشن پیپلزپارٹی کررہی ہے،اپوزیشن کی باقی جماعتیں اپوزیشن کی اپوزیشن کررہی ہیں،اختلافات ایک طرف رکھ کر حکومت کیخلاف متحد ہونا چاہیے،عوام کے مسائل حل کرنے کی کوشش نہ کی گئی تو سب کا نقصان ہوگا، شہبازشریف قومی اسمبلی میں اور حمزہ شہباز پنجاب اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر ہیں،ہم پارلیمانی نظام کے حامی ہیں روایت کے مطابق ہم نے لیڈر آف دی اپوزیشن پنجاب حمزہ سے رابطہ کرنا ہے شہباز بہت عرصے سے جیل میں ہیں وہ لیڈر آف دی ہاؤس ہے ہم ان سے رابطہ کرینگے وہ قید کیوجہ سے کئی امور پر کام نہیں کرپا رہے ہیں اس پر بات کرینگے ہم انکو لیڈر آف دی اپوزیشن تسلیم کرتے ہیں پیپلزپارٹی نے ہر محاذ پر حکومت کا مقابلہ کیا، وفاق اور پنجاب میں بھی مقابلہ کیا

نیب دفتر کے باہر ن لیگی کارکنان کی ہنگامہ آرائی پر وزیراعلیٰ کا نوٹس، رپورٹ طلب

ن لیگی کارکنان کے پتھراؤ سے 3 اہلکار زخمی،ن لیگی کارکنان گرفتارکر لئے گئے

کیپٹن صفدر کا کورٹ مارشل کرو، اب سب اندرجائیں‌ گے،مبشر لقمان کا اہم انکشاف

کیپٹن ر صفدر کی گرفتاری کی ویڈیو سامنے آ گئی، پولیس کی جانب سے وی وی آئی پی پروٹوکول

کیپٹن ر صفدر کی گرفتاری، وفاقی وزراء نے بڑا مطالبہ کر دیا

کراچی جلسہ میں بلانے والی پیپلز پارٹی نے کیپٹن ر صفدر کی گرفتاری پر ہاتھ کھڑے کر دیئے

بلاول سے کیسا تعلق؟ نہتی عورت کا کتنا خوف ؟ مریم نواز کے اہم انکشافات

بلاول زرداری کا کہنا تھا کہ گزشتہ3سال سے حکومتی پالیسیوں کی وجہ سے ناکامی کاسامنا ہے، غربت میں اضافہ ہوتا جارہا ہے لیکن حکومت کے پاس اس کا کوئی حل نہیں پاکستان کی معاشی ترقی رکی ہوئی ہے، پاکستان مہنگائی کی شرح میں دیگر ممالک سے آگے ہے،معاشی لحاظ سے ہم بنگلا دیش سے بھی پیچھے ہیں، پی ٹی آئی ایم ایف کی ڈیل سے پاکستان نے معاشی خودمختاری کھودی ہے، آرڈیننس کے تحت اسٹیٹ بینک پاکستان کی پارلیمان اورعدالت کوجوابدہ نہیں ہوگا ،اسٹیٹ بینک سے متعلق آرڈیننس کی مخالفت کرتے ہیں، ہم معاشی طور پر افغانستان کا مقابلہ نہیں کرسکتے،وزیر خزانہ نہیں ، پالیسیاں تبدیل کرنے سے تبدیلی ائے گی۔ کسی دور میں اتنی مشکلات کا سامنا نہیں کرنا پڑا،

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.