fbpx

مٹی والی ٹرالیوں سے کارپٹ سڑکیں کچی بن گئیں

قصور
سڑکوں پہ ٹرالیوں کا راج,تارکول سے بنی کارپٹ سڑکیں مٹی کہ تہہ جمنے سے کچی سڑکوں میں تبدیل،دھول مٹی اڑنے سے لوگ بیماریوں میں مبتلا ہونے لگے

تفصیلات کے مطابق قصور ضلع بھر اور خاص کر تحصیل قصور کے قرب و جوار کے گاؤں دیہات کی سڑکوں پہ مٹی سے لدے ٹریکٹر ٹرالی والوں کا راج ہے جنہوں نے سڑکوں کو اپنی ذاتی ملکیت سمجھ رکھا ہے
مٹی سے لدی بغیر ترپال ٹرالیوں سے مٹی گرتی رہتی ہے جس کے باعث تارکول سے بنی کارپٹ سڑکیں مٹی کی تہہ جمنے سے کچی سڑکصں میں تبدیل ہو رہی ہیں اور مٹی کے جمنے کے باعث سڑکیں ٹوٹ رہی ہیں
قصور کے نواحی گاؤں کھارا میں چند سال قبل بننے والی رائیونڈ قصور روڈ ڈرین کیساتھ سے گاؤں آنے والی تارکول کی پختہ سڑک مٹی کی ٹرالیوں کے باعث ٹوٹ چکی ہے اور ساری سڑک پہ مٹی کی کئی تہیں بن گئی ہیں
اس سڑک پہ دن رات مٹی والی ٹرالیاں گزرتی ہیں اور مٹی گراتی رہتی ہیں جس کے باعث لوگوں کا گزرنا دشوار ہے اور دھول مٹی اڑنے سے لوگ کئی طرح کی بیماریوں میں مبتلا ہو رہے ہیں

اہلیان علاقہ نے ڈپٹی کمشنر قصور،اسسٹنٹ کمشنر قصور سے ٹرالی مالکان کی طرف سے سرکاری سڑک کو نقصان پہنچا کر لوگوں کو بیمار کرنے اور راستوں میں رکاوٹ ڈالنے پر ازخود نوٹس کا مطالبہ کیا ہے