fbpx

آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سے اٹلی کے وزیر خارجہ کی ملاقات:پاکستان کے کردار کوسراہا

راولپنڈی:آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سے اٹلی کے وزیر خارجہ کی ملاقات:پاکستان کے کردار کوسراہا،اطلاعات کے مطابق آج اٹلی کے وزیرخارجہ پاکستان کے دورے پرہیں اوراٹلی کے وزیرخارجہ نے آرمی چیف جنرل قمرجاوید باجوہ سے اہم ملاقت کی ہے

آرمی چیف جنرل قمرجاوید باجوہ سے ملاقات کے دوران اطالوی وزیرخارجہ نے افغان صورتحال میں پاکستان کے کردار کو سراہا،

پاک فوج کے ترجمان ادارے آئی ایس پی آر کے مطابق اس موقع پر آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے کہا ہے کہ ہم دونوں ملکوں کے درمیان دوطرفہ فائدہ مند کثیر الجہتی تعلقات میں وسعت کےخواہاں ہیں،

آرمی چیف نے کہا کہ پاکستان اٹلی کے ساتھ اپنے تعلقات کو قدر کی نگاہ سے دیکھتا ہے، پاک فوج کے ترجمان ادارے آئی ایس پی آر افغانستان کیلئےانسانی امدادمیں تعاون پربھی تبادلہ خیال کیا گیا،

اس اہم ملاقات میں باہمی دلچسپی، علاقائی سیکیورٹی اور افغانستان کی صورتحال پر تبادلہ خیال خیال کیا گیا

یاد رہےکہ اس سے پہلے اٹلی اور پاکستان درمیان وفود کی سطح پر مذاکرات وزارتِ خارجہ میں ہوئے۔ پاکستانی وفد کی قیادت وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی جبکہ اطالوی وفد کی قیادت ہم منصب لیوگی دے مایو کر رہے تھے۔

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کورونا وبا کے دوران قیمتی جانوں کے نقصان پر اطالوی ہم منصب کے ساتھ اظہار تعزیت کیا اور کہا کہ جس طرح اٹلی نے کورونا وبا کے پھیلائو کو روکنے کیلئے موثر اقدامات کئے وہ قابل تحسین ہیں جبکہ ہمیں پاکستان میں محدود وسائل کے باوجود سمارٹ لاک ڈائون کے ذریعے اس وبا پر قابو پانے اور اس کے پھیلائو کو روکنے میں کافی مدد ملی۔

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ پاکستان، اٹلی کے ساتھ دو طرفہ تعلقات کو خصوصی اہمیت دیتا ہے۔ یورپی یونین اور اقوام متحدہ کی سطح پر پاکستان اور اٹلی کے درمیان مربوط اشتراک، مستحکم تعلقات کا مظہر ہے،اہم علاقائی و عالمی امور پر پاکستان اور اٹلی کے نقطہ نظر میں مماثلت حوصلہ افزا ہے۔

وزیر خارجہ نے، جی ایس پی پلس اسٹیٹس اور فیٹف کے حوالے سے، اٹلی کی جانب سے پاکستان کی حمایت پر اطالوی وزیر خارجہ کا شکریہ ادا کیا۔ انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم عمران خان یورپی یونین کے بہت سے ممالک کے سربراہان مملکت کے ساتھ افغانستان کی صورتحال پر رابطے میں ہیں۔مجھے یورپی یونین کے خارجہ امور کے سربراہ جوزف بوریل سمیت کئی یورپی وزرائے خارجہ کے ساتھ افغانستان کی صورتحال پر تبادلہ ءخیال کا موقع مل چکا ہے۔