fbpx

میری کامیابیوں کا سہرا میرے استادوں کے سر ہے سید نور

معروف ہدایتکار سید نور کہتے ہیں کہ میں آج جو کچھ بھی ہوں اپنے استادوں کی وجہ سے ہوں ان سے جو کچھ سیکھا وہی میرے کام آیا، اگر میں‌ یہ کہوں کہ آج جو کچھ ہوں اپنے استادوں اور سیئنرز کی وجہ سے ہوں تو بے جا نہیں‌ہو گا. اپنے استادوں اور سینئرز سے جو کچھ سیکھا ہوتا ہے وہ ساری زندگی کام آتا ہے اس لئے بہت ضروری ہے کہ ان کی عزت کی جائے اور ان کو ہمیشہ یاد رکھا جائے.جو اپنے سئنیرز کی عزت نہیں کرتے ان کو پھل بھی ویسا ہی ملتاہے. سید نور نے مزید کہا کہ میں‌نے اپنی طرف سے اچھی فلمیں بنانے کی کوشش کی اس میں مجھے میری توقعات سے زیادہ کامیابی ملی میں نے کبھی نہیں

سوچا تھا کہ اللہ مجھے اتنی عزت سے نوازے گا اور اتنی کامیابیاں دے گا. میں نے اپنے بڑوں سے جو کچھ سیکھا وہ میں آگے منتقل کررہا ہوں ڈائریکشن ہو یا لکھنا لکھانا مجھے جو آتا ہے میں کھلے دل کے ساتھ اپنے سے جونئیرز کو سکھا رہا ہوں اور سیکھنے کےلئےویسے تو کوئی بھی عمر نہیں‌ہوتی کبھی بھی آپ کچھ بھی طے کر سکتے ہیں کہ میں نے کیا کرنا ہے لہذا سیکھنے کے لئے عمر کی قید نہیں. عمر کے کسی بھی حصے میں آپ کچھ بھی کر سکتے ہیں سیکھ سکتے ہیں. سید نور نے کہا کہ فلمی صنعت کی بحالی کے لئے جو کام ہو رہا ہے وہ زبردست ہے جس یہ سلسلہ جاری رہنا چاہیے کبھی بھی رکنا نہیں چاہیے.