مشن امن،ایران،سعودی عرب کے دورہ کے بعد وزیر خارجہ کی نیو یارک، واشنگٹن میں اہم ملاقاتیں طے

مشن امن،ایران،سعودی عرب کے دورہ کے بعد وزیر خارجہ کی نیو یارک، واشنگٹن میں اہم ملاقاتیں طے

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق وزیرخارجہ شاہ محمودقریشی کل نیویارک میں اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل سے ملاقات کریں گے ،وزیرخارجہ کی اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے صدرسے بھی ملاقات ہوگی ،ملاقاتوں میں ایران امریکہ کشیدگی کےحوالےسےبات چیت ہوگی،وزیرخارجہ مشرق وسطیٰ میں کشیدگی پرپاکستان کی پوزیشن سےآگاہ کریں گے،

وزیرخارجہ ایران اورامریکہ کےدرمیان ثالثی کاکرداراداکرنےکاپیغام بھی پہنچائیں گے،وزیرخارجہ مقبوضہ کشمیرکی صورت حال کی صورت حال سےبھی آگاہ کریں گے،وزیرخارجہ نیویارک کےبعدواشنگٹن بھی جائیں گے،وزیرخارجہ شاہ محمودقریشی کی واشنگٹن میں بھی اہم ملاقاتیں طےہیں

پاکستان کو کشمیر پر ایک اور بڑی کامیابی ملی ہے، مقبوضہ کشمیر کی صورتحال پر اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل نے کشمیر پر اجلاس طلب کر لیا ہے، اجلاس نیو یارک میں ہو گا جس میں اگست کے بعد دوسری بار مقبوضہ کشمیر کے مسئلے پر بات چیت ہوگی

اجلاس میں اقوام متحدہ فوجی مبصرین گروپ ایل او سی کی صورتحال پر بریفنگ دیں گے، وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی اجلاس میں شرکت کے لیے آج نیو یارک پہنچیں گے،وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے سلامتی کونسل کو متعدد خطوط لکھے تھے کشمیر کے حوالہ سے یہ دوسرا اجلاس اگست کے بعد ہو گا

اقوام متحدہ مداخلت کرے، تقریر سے کچھ نہ ہوا تو دنیا کو پتہ چل جائے گا کشمیر میں کیا ہو رہا ہے، وزیراعظم

اسلامی ممالک کو کشمیریوں کے ساتھ یکجہتی دکھانی ہوگی، وزیراعظم

بھارتی حکومت نے 5 اگست کو آرٹیکل 370 کو منسوخ کرنے کے فیصلے سے قبل اگست میں ہزاروں نیم فوجی دستوں کو جموں وکشمیر پہنچایا تھا۔

مقبوضہ کشمیر میں بھارت کی طرف سے مسلط کر دہ فوجی محاصر ہ جاری رہنے کی وجہ سے وادی کشمیر اور جموں اور لداخ خطوں کے مسلم اکثریتی علاقوں میں نظام زندگی بدستور مفلوج رہا اور لوگ شدید مشکلات سے دوچارہیں۔ وادی کشمیر میں دفعہ 144کے تحت عائدسخت پابندیوں ، بڑی تعداد میں بھارتی فوجیوںکی تعیناتی ، پری پیڈ موبائل فون، ایس ایم ایس اور انٹرنیٹ سروسز بدستور معطل ہونے کے باعث لوگوں کو شدید مشکلات کا سامنا ہے اور وہ ایک دوسرے سے رابطہ بھی نہیں کرسکتے۔

کپتان ہو تو ایسا،اپوزیشن کی سازشوں کے باوجود وزیراعظم عمران خان کو ملی اہم ترین کامیابیاں

وزیراعظم عمران خان نے ٹرمپ سے کشمیر بارے بڑا مطالبہ کر دیا

وزیراعظم عمران خان سے چینی وزیر خارجہ کی ملاقات، اہم امور پر تبادلہ خیال

ہم اپنی سرزمین پرکسی دہشتگرد گروپ کوکام کرنے کی اجازت نہیں دیں گے، وزیراعظم

نائن الیون کے بعد پاکستان نے امریکہ کی جنگ میں شامل ہو کر بہت بڑی غلطی کی، وزیراعظم عمران خان

کشمیر سے متعلق سوال پر ٹرمپ نے کیا جواب دیا؟ جان کر ہوں حیران

حریت رہنما اور جموں کشمیر پیپلز موومنٹ کے چیئرمین میر شاہد سلیم میر کی زیر صدارت جموں میں مختلف سیاسی اور سماجی تنظیموں کے نمائندوں کے اجلاس میں بھارتی پارلیمنٹ کی طرف سے حال ہی میں مسلمان مخالف شہریت کے متنازعہ قانون کی منظور ی کے بعد پید ا ہونے والی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا۔اجلاس کے شرکاء نے قانون کی شدید مذمت کرتے ہوئے اسے بھارت میں مسلمانوں کو نشانہ بنانے اور انہیں ملک بدر کرنے کی بڑی سازش کاحصہ قرار دیا۔

مقبوضہ کشمیر میں دکانیں، کاروبار، تعلیمی مراکز بند ہیں اور لوگ گھروں میں محصور ہو کر رہ گئے ہیں۔ مقبوضہ وادی میں نام نہاد سرچ آپریشن کی آڑ میں مظلوم اور نہتے کشمیریوں کے قتل کا سلسلہ بھی جاری ہے۔ وادی میں خوف کے سائے برقرار ہیں جبکہ سری نگر کی جامع مسجد سمیت دیگر مساجد میں نماز جمعہ ادا نہیں کرنے دی جاگتی۔ قابض بھارتی فوج نے کشمیریوں کی زندگی اجیرن بنا دی ہے اور وادی میں حالات تاحال کشیدہ ہیں اور وادی کا دنیا سے تعلق تاحال منقطع ہے۔کشمیریوں کونماز جمعہ کی ادائیگی سے روکنے کے لیے ، سری نگرمیں جامع مسجد کے اطراف کی سڑکیں سیل ہیں۔ کشمیری  نماز جمعہ کی ادائیگی سے محروم ہیں۔

مقبوضہ کشمیر میں مین اسٹریم سیاسی جماعتوں سے وابستہ بیشتر لیڈران جن میں تین سابق وزرائے اعلیٰ ڈاکٹر فاروق عبداللہ ، عمر عبداللہ اور محبوبہ مفتی بھی شامل ہیں، پانچ اگست سے مسلسل نظر بند ہیں . حریت رہنما سید علی گیلانی، میر واعظ عمر فاروق، یاسین ملک، شبیر شاہ ،سیدہ آسیہ اندرابی و دیگر بھی نظر بند ہیں یا جیلوں میں ہیں.

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.