مولانا کے آزادی مارچ کی ناکامی کے بعد بلاول نے "مارچ” میں "مارچ” کرنے کا فیصلہ کر لیا

مولانا کے آزادی مارچ کی ناکامی کے بعد بلاول نے "مارچ” میں "مارچ” کرنے کا فیصلہ کر لیا
باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق مولانا فضل الرحمان کے آزادی مارچ کی ناکامی کے بعد پیپلز پارٹی نے حکومت کے خلاف ٹرین مارچ کرنے کا فیصلہ کر لیا، پیپلز پارٹی کا ٹرین مارچ بلاول زرداری کی قیادت میں ماہ مارچ میں ہو گا.

پی پی کے ٹرین مارچ میں آصف زرداری شرکت نہیں کریں گے بلکہ بلاول قیادت کریںگے اور آصف زرداری ہدایات دیں گے، مارچ کا آغاز شہر قائد کراچی سے 26 مارچ کو ہو گا، اور دو دن میں لاڑکانہ پہنچے گا، لاڑکانہ میں بلاول زرداری جلسہ سے خطاب کریں گے.

اس ضمن میں ایک اہم اجلاس ہوا جس میں بلاول بھی شریک ہوئے، اجلاس میں بتایا گیا کہ پیپلزپارٹی نے وفاقی حکومت کیخلاف احتجاجی ٹرین مارچ کی تیاریاں مکمل کر لی ہیں، پیپلزپارٹی نے فیصلہ کیا ہے کہ ٹرین مارچ کا آغاز کراچی سے اور اختتام سرشاہنواز بھٹو ریلوے اسٹیشن پرہوگا۔ اجلاس میں پی پی کی تمام رہنماں اور کارکنان کوہدایات جاری کی گئی ہیں کہ وہ ٹرین مارچ میں لازمی شریک ہوں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.