مودی کا ٹرمپ کو فون، عمران خان نے ٹرمپ کو کیا کہا تھا؟ قریشی نے بتا دیا

بھارتی وزیراعظم نریندر مودی نے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو ٹیلیفون کیا ہے۔ نریندر مودی اور ڈونلڈ ٹرمپ کے درمیان کشمیر تنازعے اور دو طرفہ تعقلات پر بات چیت ہوئی۔

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق بھارتی میڈیا کا کہنا ہے کہ امریکی صدر کو مودی نے فون کیا. ۔دونوں رہنماؤں نے دو طرفہ تعلقات اور تجارت پر تبادلہ خیال کیا۔ مودی نے مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کرنے کے بعد پہلی بار امریکی صدر سے ٹیلیفون پر رابطہ کیا۔اور ڈونلڈ ٹرمپ کو مقبوضہ کشمیر سے متعلق بھارتی موقف سے آگاہ کیا

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی پر زور دیا ہے کہ وہ پاکستان کے ساتھ کشیدگی کو کم کریں ،وائٹ ہاﺅس کی جانب سے جاری بیان کے مطابق صدر ٹرمپ نے نریندر مودی سے گفتگو میں پاکستان کے ساتھ کشیدگی کم کرنے کی ضرورت پر زور دیا اور کہا کہ علاقائی امن کی صورتحال کو خراب نہ ہونے دیا جائے۔

دوسری جانب پاکستان کے وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کا کہنا ہے کہ وزیراعظم عمران خان کی 16اگست کو صدر ٹرمپ سے گفتگو ہوئی، وزیراعظم نےصدرٹرمپ سےبھارتی وزیراعظم سےبات کرنےکوکہا،وزیراعظم نےپاکستان کاموقف تفصیل کےساتھ بیان کیا،امریکی صدرکوخطےکی موجودہ صورتحال پرتشویش ہے،وزیراعظم عمران خان نےصدرٹرمپ کوبھارتی یکطرفہ اقدام سےآگاہ کیا،وزیراعظم نےکہاکہ5اگست کےاقدام سےخطےمیں سنگین صورتحال پیداہوئی،

شاہ محمود قریشی کا مزید کہنا تھا کہ مقبوضہ وادی میں سنگین بحران پیداہوچکاہے،بھارتی اقدام کامقصد وادی کی خصوصی حیثیت کوتبدیل کرناہے،دنیاکی نظروں سےمقبوضہ کشمیرکےمسائل اوجھل ہیں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.