fbpx

ملک بھر میں چند مقامات کے سوا تمام متاثرہ روڈ نیٹ ورک بحال کردیئے گئے. این ایچ اے

نیشنل ہائی وے اتھارٹی نے دعویٰ کیا ہے کہ ملک بھر میں چند مقامات کے سوا این ایچ اے کا روڈ نیٹ ورک بحال کردیا گیا ہے۔

ترجمان این ایچ اے کے مطابق کچلاک،ژوب، ڈیرہ اسماعیل خان سیکشن پر سگو پل اور بحرین۔کالام کے سوا پورا نیٹ ورک ٹریفک کے لیے کھلا ہے۔ متاثرہ مقامات پر متبادل راستے بنا کر ٹریفک رواں کردیا گیا ہے جب کہ سندھ میں کوٹری، دادو، کشمورکے متاثرہ مقامات پر پانی کی سطح کم ہونے پر ٹریفک بحال کردی جائے گی۔

این ایچ اے ترجمان کے مطابق دادو، مورو پل اور قاضی عامری پل کے ذریعے ٹریفک قومی شاہراہ N-5 کی جانب موڑ دی گئی ہے۔ اُدھر بلوچستان میں M-8 کے خضدار، قوبہ سعید خان سیکشن پر وانگو ہل اور بریجہ کے مقامات پر سڑکوں کوصاف کرنے کا کام تیزی سے جاری ہے۔ بلوچستان میں باقی ماندہ نیٹ روک پر ٹریفک بحال کردی گئی ہے۔

ترجمان کا کہنا تھا کہ این ایچ اے اپنے نیٹ ورک کے ساتھ صوبائی رابطہ سڑکوں کی بحالی کے لیے بھی شانہ بشانہ مصروف عمل ہے۔ وفاقی وزیر مواصلات مولانا اسعد محمود کی ہدایت پر وفاقی سیکرٹری مواصلات وچیئرمین این ایچ اے کیپٹن(ر) محمد خرم آغا سڑکوں کی بحالی کے کام کی مسلسل نگرانی کر رہے ہیں۔

واضح رہے کہ وزیر اعظم شہباز شریف نے بارش اور سیلاب سےتباہ ہونے والے مواصلاتی نظام کی بحالی اور سڑکوں کی مرمت جمعہ تک مکمل کرنے کی ہدیات کی تھی. وزیرِ اعظم شہباز شریف کی زیرِ صدارت ملک بھر میں بجلی، سڑکوں اور مواصلاتی نظام کی بحالی پر ہنگامی اجلاس ہوا تھا، خیبر پختونخوا کے سیلاب زدہ علاقوں کے دورے سے واپسی پر ایف ڈبلیو او سمیت دیگر اداروں کے نقصانات اور انفراسٹرکچر کی بحالی پر جاری کام کی پیش رفت کا جائزہ لینے کیلئے اجلاس کی صدارت کی تھی.

اس موقع پر وزیر اعظم نے ہدایت کرتے ہوئے کہا تھا کہ کالام سوات رابطہ سڑکیں آئندہ ہفتے تک بحال کی جائیں،پاور ڈویژن 25 اگست سے اب تک بجلی کے نظام کی بحالی کیلئے اپنے کام کی تفصیلی رپورٹ پیش کرے۔