مظفرگڑھ میں کمزور عورت پر ظلم ڈھانے کی روایت آج بھی زندہ۔

0
37

کمزور عورت پر ظلم ڈھانے کی روایت آج بھی مظفرگڑھ میں زندہ ھے ۔ بھائی کی زیادتی کا بدلہ مبینہ طور پر بہن سے لینے کی کوشش کی گئی ۔مزاحمت پر چھریوں اور ڈنڈوں سے وار کرکے عورت کو تشدد کا نشانا بنا ڈالا ۔مظفرگڑھ کے نواحی تھانہ خان گڑھ کی حدود موضع گوپانگ میں اوباش نوجوان کے تشدد کا شکار خاتوں اور اس کے اہلخانہ نےاحتجاجی مظاہرہ کرتے ھوئے بتایا کہ کوثر بی بی کے بھائی کے ساتھ رنجش کا بدلہ لینے کیلیے گزشتہ روز جب کوثر بی بی گھر پر موجود تھی تواوباش نوجوان نزر گولا نے اس سے زیادتی کرنے کی کوشش کی ۔

متاثرہ خاتون منت سماجت اور ترلے کرتی رھی ۔مگر ظالم کو رحم نہ آیا ۔اور کوثر بی بی کے مزاحمت کرنے پر اوباش نے اسے ڈنڈوں اور چھریوں سے تشدد کا نشانا بنا ڈالا ۔اور لہو لہان کر دیا۔ بعد ازاں متاثرہ خاتون نے خان گڑھ پولیس کو وقوعہ کی رپورٹ درج کرائی ۔کوثر بی بی اور اہل خانہ نے ڈی پی او مظفرگڑھ اور آئی جی پنجاب سے معاملے کا نوٹس لیکر انصاف فراہم کرنے کا مطالبہ کیا ھے

Leave a reply