fbpx

کراچی:این اے 245 میں انتخابی مہم کا وقت ختم ،پولنگ کل ہو گی

قومی اسمبلی کی یہ نشست پی ٹی آئی کے عامر لیاقت کے انتقال کے باعث خالی ہوئی تھی۔

کراچی میں قومی اسمبلی کے حلقے این اے 245 میں انتخابی مہم کا وقت ختم ہوگیا پولنگ کل اتوار کو ہوگی-

باغی ٹی وی :این اے 245 پر پیپلزپارٹی اور جے یو آئی کے امیدوار ایم کیو ایم پاکستان کے حق میں دست بردار ہوگئے ہیں پی ایس پی کے امیدوار اور فاروق ستار بھی انتخابی میدان میں ہیں تحریک انصاف اور ایم کیو ایم میں کانٹے کامقابلہ متوقع ہے انتخابی دنگل میں 15 امیدوار مد مقابل ہیں۔

اسلام آباد میں جلسے،جلوس پر پابندی عائد ہے،ضلعی انتظامیہ

ضمنی الیکشن میں 5 لاکھ 15ہزار ووٹرز کے لئے 263 پولنگ اسٹیشن اور 1052 پولنگ بوتھ قائم کئے گئے ہیں 2018ء کے مقابلے میں 71463 ووٹرز کا حلقے میں اضافہ ہوا ہے۔

رات12بجتے ہی انتخابی مہم کا وقت ختم ہوگیا۔ انتخابی مہم کے آخری روز سیاسی جماعتوں کی جانب سےمختلف علاقوں میں ریلیاں نکالی گئیں حلقے میں سیاسی جماعتوں کی جانب سے پرچم اور امیدواروں کے بینرز آویزاں تھے ۔

پاکستان ہاؤس سے چیئرمین پاک سرزمین پارٹی مصطفی کمال کی جانب سے ریلی نکالی گئی اس سے پہلے تحریک لبیک پاکستان کی جانب سے این اے 245 کے مختلف علاقوں میں ریلی نکالی گئی جبکہ ایم کیو ایم نے سندھ میں نئی حلقہ بندیوں کو الیکشن سے پہلے دھاندلی قرار دے دیا-

صدر مملکت نے 128 وکلاء کی بطور ایڈیشنل ڈپٹی اور اسسٹنٹ اٹارنی جنرل تقرری کی منظوری دیدی

خالد مقبول صدیقی کا کہنا ہےکہ حلقہ بندیوں سے اکثریت کو اقلیت میں بدل دیا گیا۔ کراچی اور حیدر آباد کو لسانی بنیادوں پر تقسیم کیا گیا۔ کہیں 90 ہزار، تو کہیں 25 ہزار کا حلقہ بنا دیا گیا۔ اپنے حق کیلئے مقدمہ کہاں پیش کریں؟

ڈاکٹر فاروق ستارکاکہنا تھا کہ عوام 21 اگست کو تالے پر ہی ٹھپہ لگائیں جو سیاسی جماعتیں عوام کی آنکھوں میں دھول جھونک کر ایک دوسرے پر الزام لگارہے ہیں ان کو بے نقاب کرنے آیا ہوں –

پی ٹی آئی سندھ کے صدر علی زیدی اور سابق گورنر سندھ عمران اسماعیل کی قیادت میں حلقے میں ریلی نکالی گئی عمران اسماعیل نے کہا ویسےتو اس کی ضرورت نہیں تھی لوگوں کے دل میں عمران خان رہتا ہے لوگوں کے دماغ میں عمران خان کا پیغام پہنچ گیا ہے۔

لاہور میں 10 سالہ گھریلو ملازمہ پرمالکان کا تشدد، میاں بیوی گرفتار