fbpx

این اے 249 کا ضمنی انتخاب، کالعدم ٹی ایل پی مقابلے میں تیسرے نمبر پر آ گئی

کراچی این اے 249 کے ضمنی انتخاب میں کالعدم تحریک لبیک مقابلے میں تیسرے نمبر پر آگئی، مسلم لیگ ن 1409 ووٹوں کے ساتھ پہلے، پیپلزپارٹی1277ووٹ لے کر دوسرے، کالعدم ٹی ایل پی 1182 ووٹ لے کرتیسرے، پی ایس پی چوتھے، ایم کیوایم پانچویں اور پی ٹی آئی چھٹے نمبر ہے۔ تفصیلات کے مطابق 276 پولنگ اسٹیشنز میں 32 کے غیرحتمی غیرسرکاری نتائج کے تحت مسلم لیگ ن کے امیدوار مفتاح اسماعیل 1409ووٹ لے کر آگے ہیں۔
پیپلزپارٹی کے مندوخیل 1277ووٹ لے کر دوسرے نمبر ہیں، کالعدم ٹی ایل پی کے نذیراحمد 1182 ووٹ لے کرتیسرے نمبر پر ہیں، پاک سرزمین پارٹی کے مصطفی کمال 934 ووٹ لے کر چوتھے نمبر پر ہیں۔ ایم کیوایم کے حافظ محمد مرسلین 863 ووٹ لے کر پانچویں اور تحریک انصاف کے امجد آفریدی 707 ووٹ لے کر چھٹے نمبر پر ہیں۔
واضح رہے کراچی کے قومی اسمبلی کے حلقہ این اے249 میں آج ضمنی انتخاب ہوا ہے، پولنگ کا عمل صبح 8 بجے سے شام 5 بجے تک بلاتعطل جاری رہا، الیکشن مسلم لیگ ن کے امیدوار مفتاح اسماعیل اور تحریک انصاف کے امیدوار امجد آفریدی کے درمیان کانٹے دار مقابلہ متوقع ہے۔

حلقے میں مجموعی ووٹوں کی تعداد تقریباً 3 لاکھ 39 ہزار ہے، اب ووٹوں کی گنتی کا عمل جاری ہے۔ خیال رہے کہ این اے 249 کی نشست فیصل واوڈا کے سینیٹر بننے کے باعث خالی ہوئی تھی، اس نشست پر ن لیگ، پیپلز پارٹی، تحریک انصاف، پی ایس پی اور ایم کیو ایم پاکستان کے امیدواروں کے درمیان مقابلہ ہے۔ انتخابی عمل کے دوران ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی پر پی ٹی آئی کے 5 ارکانِ اسمبلی کی این اے 249 سے حلقہ بدری کے احکامات جاری کیے گئے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.