fbpx

این اے 249 میں ووٹوں کی گنتی کا عمل جاری ہے

قومی اسمبلی کے حقلہ این اے 249 میں پولنگ کا وقت ختم ہونے کے بعد ووٹوں کی گنتی کا عمل جاری ہے، تاہم اب تک موصول ہونے والے غیر حتمی ور غیر سرکاری نتائج کے مطابق پاکستان مسلم لیگ (ن) کے مفتاح اسمٰعیل آگے ہیں۔کراچی کے قومی اسمبلی کے حلقے این اے 249 میں آج ہونے والے ضمنی انتخاب کے سلسلے میں پولنگ شام پانچ بجے تک بلا تعطل جاری رہی۔پولنگ کا وقت ختم ہونے کے بعد بھی پولنگ اسٹیشن میں موجود ووٹرز کو ووٹ ڈالنے کی اجازت دی گئی، جبکہ اس کے ساتھ ہی ووٹوں کی گنتی کا عمل بھی شروع ہوگیا۔این اے 249 کے 276 میں سے 19 پولنگ اسٹیشنز کے غیر حتمی اور غیر سرکاری نتائج موصول ہوگئے جس کے مطابق پاکستان مسلم لیگ (ن) کے مفتاح اسماعیل 823 ووٹس لے کر آگے ہیں۔اسی طرح پاکستان پیپلز پارٹی کے امیدوار قادر مندوخیل 741ووٹ لے کر دوسرے، پی ایس پی کے مصطفی کمال 639 ووٹ لے کر تیسرے، کالعدم ٹی ایل پی کے نذیر احمد 503 ووٹ لے کر چوتھے، ایم کیو ایم کے حافظ محمد مرسلین 495 ووٹ لے کر پانچویں نمبر پر ہیں۔غیر حتمی و غیر سرکاری نتائج کے مطابق پاکستان تحریک انصاف کے امجد آفریدی 428 ووٹ لے کر چھٹے نمبر پر ہیں۔حلقے کے تمام پولنگ اسٹیشنز کے باہر سیکیورٹی کے سخت انتظامات کیے گئے تھے، مختلف پولنگ اسٹیشنز پر تیاریاں نامکمل تھیں اور پولنگ وقت پر شروع نہیں ہوسکی تھی۔
پولنگ اسٹیشنز نمبر 249، 247، 246، 241 میں بیلٹ باکس سیل نہیں کیے جا سکے تھے، جبکہ ان پولنگ اسٹیشنز پر پولنگ کا عمل شروع نہ ہونے کی وجہ سیاسی جماعتوں کے پولنگ ایجنٹس کا وقت پر نہ پہنچنا بھی تھا۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.