القادر ٹرسٹ اور توشہ خانہ کیس:نیب بتا سکتی ہے کہ چیئرمین پی ٹی آئی کو کہاں پیش کیا جائے گا،جج محمد بشیر

نوٹیفکیشن ہوا تو پھر اڈیالہ جیل سماعت کیلئے جائیں گے
0
72
Imran Khan NAB

اسلام آباد: احتساب عدالت کے جج محمد بشیر نے صحافیوں کے سوال پر مکالمہ کرتے ہوئے القادر ٹرسٹ اور توشہ خانہ کیس میں نیب بتا سکتی ہے کہ چیئرمین پی ٹی آئی کو کہاں پیش کیا جائے گا۔

باغی ٹی وی : احتساب عدالت کے جج محمد بشیر سے صحافیوں نے ملاقات کی ،دوران گفتگو صحافی نے جج محمد بشیر سے سوال کیا کہ اطلاعات ہیں کہ دونوں کیسز کی جیل میں سماعت کا نوٹیفکیشن ہو رہا ہے؟ جس پر جج محمد بشیر کا کہنا تھا کہ نوٹیفکیشن ہوا تو پھر اڈیالہ جیل سماعت کیلئے جائیں گے،بعد ازاں جج محمد بشیر نے صحافیوں سے سوال کیا کہ کیا آپ لوگ بھی جیل جائیں گے؟ جس پر صحافیوں نے جواب دیا کہ ہمیں اڈیالہ جیل کے اندر داخلے اور رپورٹنگ کی اجازت نہیں،جج محمد بشیر نے کہا کہ ویسے تو اجازت ہونی چاہیےاس لیے تو اوپن کورٹ ہوتی ہے۔

دوسری جانب قومی احتساب بیورو (نیب) نے 190 ملین پاؤنڈ اسکینڈل کیس میں عمران خان کی گرفتاری کے لیے مختلف آپشنز پر غور شروع کردیا ہے، نیبذرائع کے مطابق نیب کو گرفتاری کے 24 گھنٹوں میں ملزم کو عدالت میں پیش کرنا ضروری ہے اڈیالہ جیل میں جسمانی ریمانڈ کے حصول کیلئے وزارت قانون کا نوٹیفکیشن ضروری ہے، کوشش ہے کہ کچھ دیر میں جیل سماعت کا نوٹیفکیشن جاری ہوجائے گا،نوٹیفکیشن جاری ہونے کی صورت میں احتساب عدالت کے جج محمدبشیر اڈیالہ جیل میں سماعت کریں گے۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز اسلام آباد کی احتساب عدالت میں چیئرمین پی ٹی آئی کے خلاف توشہ خانہ اور 190 ملین پاؤنڈ کیس کی سماعت جج محمد بشیر نے کی،عدالت نے چیئرمین پی ٹی آئی کے وارنٹ گرفتاری جاری کئےاور جیل سپریٹنڈنٹ کو وارنٹ تعمیل کے لیے اقدامات کا حکم دیا-

ممکنہ گرفتاری کے خدشہ،بشریٰ بی بی اسلام آباد ہائیکورٹ پہنچ گئیں

بعد ازاں نیب راولپنڈی کی ٹیم القادر ٹرسٹ کیس میں پی ٹی آئی کے چیئرمین عمران خان سے تفتیش کے لیے اڈیالہ جیل پہنچی، نیب ٹیم بغیر اسکواڈ کے صرف 2 گاڑیوں میں اڈیالہ جیل پہنچی، اسسٹنٹ ڈائریکٹر آصف اور وقارالحسن نے نیب ٹیم کی قیادت کی، نیب ٹیم نے چییرمین پی ٹی آئی سے اڈیالہ جیل میں تفتیشی کارروائی مکمل کی نیب ٹیم نے القادر ٹرسٹ سے متعلق عمران خان سے مختلف سوالات کیے، عمران خان اب اڈیالہ جیل میں نیب کورٹ کی تحویل میں ہوں گے۔

دوسری جانب چیئرمین پی ٹی آئی کے خلاف سائفر کیس کی سماعت جیل میں ہوگی جس میں 6 گواہان کو پیش کیا جائے گا، چیئرمین پی ٹی آئی اور شاہ محمود کوجیل عدالت میں پہنچا دیا گیا ہے،آفیشل سیکریٹ ایکٹ سے متعلق سائفر کیس کی سماعت اڈیالہ جیل میں جاری ہے، خصوصی عدالت کے جج ابوالحسنات ذوالقرنین سماعت کررہے ہیں۔

اسد قیصر 2 روزہ جسمانی ریمانڈ پر اینٹی کرپشن کے حوالے

چیئرمین پی ٹی آئی اور شاہ محمود کوجیل عدالت میں پہنچا دیا گیا ہے، جب کہ چییرمین پی ٹی آئی کے وکلاء اڈیالہ جیل پہنچ گئے اور ایف آئی اے کی ٹیم 6 گواہان کو لے کر اڈیالہ جیل پہنچ گئی ہے،اسپیشل پراسیکیوٹر ذوالفقارعباس، شاہ خاور، رضوان عباسی بھی جیل میں موجود ہیں، جب کہ ایف آئی اے کی جانب سے مزید 6 گواہان کو آج پیش کیا جائے گا، گواہان میں نادر خان، اقرا اشرف، حسیب بن عزیز شامل ہیں، آج کی سماعت میں 6 سرکاری گواہان کے بیانات قلم بند ہونے کا امکان ہے۔

Leave a reply